گرے ہائی برڈجنگی طریقہ سے ہماری سرحدوں کے قریب ہی دہشت گردوں کو تربیت فراہم کی گئی:جنرل زبیرمحمود حیات

گرے ہائی برڈجنگی طریقہ سے ہماری سرحدوں کے قریب ہی دہشت گردوں کو تربیت فراہم ...
گرے ہائی برڈجنگی طریقہ سے ہماری سرحدوں کے قریب ہی دہشت گردوں کو تربیت فراہم کی گئی:جنرل زبیرمحمود حیات

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)چیئرمین جوائنٹ چیفس آف سٹاف کمیٹی جنرل زبیرمحمود حیات کا کہنا ہے کہ گرے ہائی برڈجنگی طریقہ کارمشرقی پاکستان میں ہمارے خلاف استعمال کیا گیا اور ہماری سرحدوں کے قریب ہی دہشت گردوں کو تربیت فراہم کی گئی۔

چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی جنرل زبیرمحمود حیات کا تقریب سے خطاب میں کہنا تھا کہ پاکستان میں گرے ہائی برڈ جنگی طریقہ کار کا استعمال دشمن کی جانب سے جاری ہے اوراس طریقے میں ریاستی اداروں پر عدم اعتماد کو فروغ دیا جاتا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ دراندازی ،سائبر خطرات، مسلح افواج اور ریاست پرعدم اعتماد کو استعمال کیاجاتا ہے،1971 میں گرے ہائی برڈ جنگی طریقہ کار زبان زد عام نہیں تھا،ایسے طریقہ کار سے مخصوص سیاسی و غیر سیاسی اہداف کو حاصل کیا جاتا ہے۔جنرل زبیر حیات کا مزید کہنا تھا کہ گرے زون ہائی برڈ چیلنجز میں مجرمانہ سرگرمیاں و دیگر طریقہ کار شامل ہیں،میرے نزدیک گرےزون ہائی برڈچیلنجزمیں دہشتگردی،سبوتاژشامل ہیں۔ان کا مزید کہنا تھا کہ گرے ہائی برڈجنگی طریقہ کارمشرقی پاکستان میں ہمارے خلاف استعمال کیا گیا،ہماری سرحدوں کے قریب ہی دہشت گردوں کو تربیت فراہم کی گئی، اس جنگی طریقہ کار کو ایک مخصوص وقت تک محدود کرنا ضروری ہوتا ہے۔

مزید : اہم خبریں /قومی /علاقائی /اسلام آباد