کِم جونگ سے سنگا پور میں طے ملاقات اچھی رہی تو امریکہ آنے کی دعوت دے سکتا ہوں:ڈونلڈٹرمپ

کِم جونگ سے سنگا پور میں طے ملاقات اچھی رہی تو امریکہ آنے کی دعوت دے سکتا ...
کِم جونگ سے سنگا پور میں طے ملاقات اچھی رہی تو امریکہ آنے کی دعوت دے سکتا ہوں:ڈونلڈٹرمپ

  

واشنگٹن (اے این این)امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا کہنا ہے کہ اگر ان کی شمالی کوریا کے رہنما کِم جونگ سے اگلے ہفتے سنگا پور میں طے شدہ ملاقات اچھی رہی تو وہ انھیں امریکہ آنے کی دعوت دے سکتے ہیں۔

غیرملکی میڈیا کے مطابق صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے ڈونلڈ ٹرمپ کا کہنا تھا کہ دوستانہ بات چیت کیلئے جارہا ہوں شمالی کوریا کے حوالے سے زیادہ دباؤ کی اصطلاح استعمال نہیں کرنا چاہتے۔ کوریائی جنگ کے خاتمے کیلئے کوئی معاہدہ ممکن ہو جائے۔خیال رہے کہ امریکہ اور اس کے اتحادی چاہتے ہیں کہ شمالی کوریا اپنے جوہری ہتھیاروں کو تلف کر دے مگر مسٹر ٹرمپ اس بات کو مانتے ہیں کہ اس مقصد کے حصول میں زیادہ وقت لگے گا بجائے ایک ہی ملاقات کے۔

صدر ٹرمپ کہتے ہیں کہ وہ شمالی کوریا کے حوالے سے زیادہ دباؤ کی اصطلاح استعمال نہیں کرنا چاہتے کیونکہ وہ دوستانہ بات چیت کے لیے جا رہے ہیں۔ان کا کہنا تھا کہ بہت سی پابندیاں ہیں جو وہ شمالی کوریا کے خلاف استعمال کر سکتے ہیں تاہم وہ ایسا کرنے کا ارادہ نہیں رکھتے کیونکہ ان کا خیال ہے کہ معاہدے کا امکان موجود ہے۔

مزید : بین الاقوامی