دلہا دلہن کو لینے ایسے کپڑے پہن کر پہنچ گیا کہ پورے شہر میں ہنگامہ برپا ہوگیا ، اس حرکت پر معافی مانگنا پڑ گئی کیونکہ۔۔۔

دلہا دلہن کو لینے ایسے کپڑے پہن کر پہنچ گیا کہ پورے شہر میں ہنگامہ برپا ہوگیا ...
دلہا دلہن کو لینے ایسے کپڑے پہن کر پہنچ گیا کہ پورے شہر میں ہنگامہ برپا ہوگیا ، اس حرکت پر معافی مانگنا پڑ گئی کیونکہ۔۔۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

بیجنگ(نیوز ڈیسک) شادی کے موقع پر دولہا اور دلہن کا عروسی لباس منفرد ہو تو اس کا چرچا ضرور ہوتا ہے مگر چین میں ایک دولہے نے شادی کے موقع پر ایک ایسا لباس پہن لیا کہ پورا چین ہاتھ دھو کر اس کے پیچھے پڑ گیا۔ یہ دولہا اپنی شادی کی تقریب میں شاہی جاپانی فوجی کی وردی پہن کر آ گیا، لیکن اس حرکت کے باعث سوشل میڈیا پر ایسا ہنگامہ برپا ہوا کہ اسے بالآخر معذرت کرنا پڑ گئی۔ 

ویب سائٹ medium.comکے مطابق اس دولہے کی ویڈیو یانجن شہر میں بنائی گئی جہاں یہ بارات کے آگے آگے جاپانی شاہی فوجی کا لباس پہنے ہوئے چل رہا تھا ۔ چین اور جاپان کے تعلقات ماضی میں خوشگوار نہیں رہے۔ دوسری جنگ عظیم کے دوران بھی جاپانی فوجیوں نے چینیوں پر بہت مظالم کئے جس کے باعث جاپان کے خلاف منفی اور سخت رائے پائی جاتی ہے ۔ چینی سوشل میڈیا پر جب اس شخص کی ویڈیو سامنے آئی جس میں اس نے جاپانی شاہی فوجی کا روپ دھار رکھا تھا تو اسے بدترین تنقید کانشانہ بنایا جانے لگا ۔ سوشل میڈیا صارفین نے اسے ’جنگری‘ قرار دے دیا ۔ یہ چینی زبان کا لفظ ہے جس سے مراد ایسا شخص ہے جو بظاہر تو چینی ہو لیکن اندر سے جاپانیوں کیساتھ ملا ہوا ہو۔ 

جب سوشل میڈیا پر اس دولہے کے خلاف تنقید کا طوفان برپا ہوگیا تو بالآخر یہ شخص اپنی وضاحت کرنے کیلئے سامنے آگیا ۔ سوشل میڈیا پر جاری کی گئی معذرتی ویڈیو میں اس کا کہنا تھا کہ ’’میرا نام لیوپن ہے ۔ میں جنگری نہیں ہوں میں اپنے وطن سے محبت کرنیوالا سچا چینی شہری ہوں ۔ دراصل میں ایک ڈرامے کی شوٹنگ میں حصہ لے رہا تھا جس میں میرا کردار جاپانی شاہی سپاہی کا تھا اور اسی لیے میں نے یہ لباس پہن رکھا تھا ۔ مجھے لباس تبدیل کرنے کا وقت نہیں ملا لہٰذا میں ایسے ہی تقریب میں چلا آیا۔ اب مجھے معلوم ہو چکا ہے کہ میرا یہ فیصلہ بہت غلط تھااور لوگوں کیلئے دل آزاری کا سبب بنا ہے جس پر میں دل کی گہرائی سے معافی چاہتا ہوں ۔ میں وعدہ کرتا ہوں کہ آئندہ ایسی غلطی کبھی نہیں کروں گا۔‘‘

مزید : ڈیلی بائیٹس