تیل ٹینکرز پر حملے میں اسٹیٹ ایکٹر ملوث ہیں، متحدہ عرب اما رات

تیل ٹینکرز پر حملے میں اسٹیٹ ایکٹر ملوث ہیں، متحدہ عرب اما رات

  



د بئی (آ ئی این پی)رواں برس مئی میں متحدہ عرب امارات میں شامل ریاست فجیرہ کے اسی نام کے شہر کی بندرگاہ پر تیل کے چار ٹینکرز پر حملے کی مشترکہ تفتیشی ٹیم کا کہنا ہے کہ اس میں ریاستی کردار شامل ہو سکتے ہیں۔ مشترکہ تفتیشی ٹیم میں سعودی عرب، متحدہ عرب امارات اور ناروے شامل تھے۔تفصیلات کے مطا بق اس ابتدائی رپورٹ کے مطابق یہ حملے منظم اور ماہرانہ کارروائی کا نتیجہ ہیں۔ ان ملکوں کے نمائندوں کی مشترکہ رپورٹ اقوام متحدہ کو پیش کر دی گئی ہے۔ رپورٹ کے مطابق فجیرہ کی بندرگاہ پر لنگر انداز دو سو بحری جہازوں میں صرف چار تیل ٹینکرز کو نشانہ بنانے میں انٹیلیجنس صلاحیتوں کے علاوہ تیز رفتار کشتیوں کا استعمال یقینی ہے۔ امریکا ان حملوں کا الزام ایران پر لگاتا ہے۔ تاہم تہران حکومت اسے مسترد کرتی ہے۔

مزید : عالمی منظر


loading...