صوابی، کشتی الٹنے سے 3بہنین جان سے ہاتھ دھوبیٹھی، 35افراد کو بچالیا گیا

صوابی، کشتی الٹنے سے 3بہنین جان سے ہاتھ دھوبیٹھی، 35افراد کو بچالیا گیا

  



صوابی(بیورورپورٹ)صوابی کے علاقہ وادی کنڈاؤ میں واقع کنڈل ڈیم جھیل میں سیاحوں سے بھری کشتی اُلٹ جانے سے ایک ہی خاندان کے تین کمسن بہنے ڈوب جانے سے جاں بحق ہو گئیں جب کہ کشتی میں سوار35افراد کو بچا لیا گیا۔ جمعرات کی شام موضع جھنڈا اور پابینی کے مابین واقع کنڈل ڈیم میں آئے ہوئے سیاح کشتی میں سوار ہو گئے کشتی میں زیادہ افراد سوار ہونے کی وجہ سے کشتی کا توازن برقرار نہ رہ سکا اور اُلٹ گئی جس کی وجہ سے 38افراد جس میں کافی تعداد میں بچے بھی سوار تھے پانی میں گر گئے کشتی میں اپنے بچو ں کے ساتھ سوار پاک آرمی کے کپتان شاہ فیصل اور دوسرے شخص اسد علی نے اپنے بچوں کی پر واہ کئے بغیر سوار افراد اور بچوں کو پانی سے نکالا جب کہ صوابی کے محلہ عنایت خیل کے ایک غریب ریڑھی بان فقیر زادہ کے تین کمسن بیٹیاں دس سالہ عنصہ، آٹھ سالہ منزہ اور چھ سالہ تقویٰ ڈوب کر جاں بحق ہو گئیں۔ ایک بچی کی لاش جمعہ کی رات دس بجے جب کہ دیگر دو کی لاشیں جمعہ کی صبح آٹھ بجے ریسکیو 1122اور غوطہ خور ٹیموں نے ضلعی انتظامیہ ایس ایچ او صوابی اورنگزیب خان اور دیگر کی نگرانی میں نکالی گئی۔تینوں بہنوں کی نماز جنازہ جمعہ کے رو ز جب گھر سے ایک ساتھ اُٹھائی گئی تو علاقے میں کہرام مچ گیا ضلع صوابی کے عوامی حلقوں میں کنڈل ڈیم جھیل میں غیر قانونی طور پر چلنے والی کشتیوں پر پابندی لگانے کا مطالبہ کیا۔ پی پی پی کے ڈویژنل جنرل سیکرٹری و سابق ضلعی صدر جاوید اقبال انقلابی ایڈوکیٹ، جے یو آئی کے صوبائی نائب امیر و سابق ضلعی امیر مولانا عطاء الحق درویش، جے یو آئی کے ضلعی تر جمان انجینئر محمد قیصر شاہ اور دیگر سیاسی و عوامی حلقوں نے اس واقعہ پر آفسوس کااظہار کر تے ہوئے حکومت اور انتظامیہ سے مطالبہ کیا ہے کہ غمزدہ غریب خاندان کی مالی معاونت کی جائے دریں اثناء جاں بحق ہونے والے بچیوں کے ماموں عبداللہ نے بتایا کہ جب کشتی روانہ ہوئی تو ہمارے سمیت دیگر بچیوں نے خوف کی وجہ سے رونا شروع کیا اور ہم نے ملاح کو بتایا کہ کشتی کو واپس کریں اس نے کشتی کو واپس کر کے دوبارہ روانہ کیا اور روانہ ہو تے ہی پانی میں ڈوب گیا علاقے کے عوام نے ملاح کے خلاف بھی قانونی کارروائی کا مطالبہ کیا۔ سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر متاثرہ خاندان سے ہمدردی کے لئے ان کے حجرہ پہنچے اور بچیوں کے والد فقیر زادہ سے دلی تعزیت کااظہار کر تے ہوئے کہا کہ ہم اس غم کی اس گھڑ ی میں آپ کے ساتھ ہیں حکومت متاثرہ خاندان کی ہر ممکن مدد کریگی۔ انہوں نے جاں بحق بچوں کی ایصال ثواب کے لئے فاتحہ خوانی کر تے ہوئے ضلعی انتظامیہ کو ہدایات جاری کی کہ ایسے مقامات پر فل پروف انتظامات کئے جائیں تاکہ مستقبل میں ایسے واقعات رونما نہ ہوں #

مزید : صفحہ اول


loading...