کیا سعودی عرب میں ریسلنگ مقابلوں میں لڑکیاں بھی کشتی کریں گی؟ سعودی حکومت نے فیصلہ سنا دیا

کیا سعودی عرب میں ریسلنگ مقابلوں میں لڑکیاں بھی کشتی کریں گی؟ سعودی حکومت نے ...
کیا سعودی عرب میں ریسلنگ مقابلوں میں لڑکیاں بھی کشتی کریں گی؟ سعودی حکومت نے فیصلہ سنا دیا

  

جدہ(مانیٹرنگ ڈیسک) سعودی عرب میں ڈبلیو ڈبلیو ای کے مقابلے ہونے جا رہے ہیں اور ڈبلیو ڈبلیو ای منصوبہ بندی کر رہی تھی کہ سعودی عرب میں مرد ریسلرز کے ساتھ ساتھ خواتین ریسلرز کے مقابلے بھی کروائے جائیں لیکن سعودی حکومت نے اس معاملے پر دوٹوک موقف سنا دیا ہے۔ ڈیلی سٹار کے مطابق سعودی حکومت نے کہا ہے کہ ہمارے ملک میں ہونے والے ’سپر شو ڈاﺅن‘ میں خواتین ریسلرز کی کشتی نہیں ہو گی۔

رپورٹ کے مطابق ڈبلیو ڈبلیو ای کی منصوبہ بندی تھی کہ سپر شو ڈاﺅن میں خواتین ریسلرز کا ایک میچ کروایا جائے گا۔ یہ میچ معروف ریسلرز ’الیگزا بلس‘ (Alexa Bliss)اور نتالیا کے مابین ہونا تھا۔ تاہم سعودی حکومت کے انکار کے بعد اب یہ میچ نہیں ہو سکے گا۔ ڈبلیو ڈبلیو ای مہینوں سے سعودی عرب کی جنرل سپورٹس اتھارٹی کے ساتھ رابطے میں تھی کہ وہ خواتین ریسلرز کے اس ایک میچ کی اجازت دے دے۔ تاہم جنرل سپورٹس اتھارٹی نے اب آخری وقت میں آ کر ڈبلیو ڈبلیو ای کو جواب دیا ہے اور وہ بھی انکار کی صورت میں۔

مزید : عرب دنیا