دنیا کی پہلی خاتون جو جب چاہے اپنی چھاتی بڑی کر لیتی ہے اور جب چاہے چھوٹی

دنیا کی پہلی خاتون جو جب چاہے اپنی چھاتی بڑی کر لیتی ہے اور جب چاہے چھوٹی
دنیا کی پہلی خاتون جو جب چاہے اپنی چھاتی بڑی کر لیتی ہے اور جب چاہے چھوٹی

  



برلن(مانیٹرنگ ڈیسک) جرمنی میں ایک خاتون ایسی ہے جو جب چاہے اپنی چھاتی پھلا کر بڑی کر لیتی ہے اور جب چاہے چھوٹی۔ یہ بات سن کر آپ کو حیرت ہوئی ہو گی مگر اصل معاملہ یہ ہے کہ یہ خاتون درحقیقت ٹرانس جینڈر ہے، یعنی سرجری کے ذریعے مرد سے عورت بنی ہے اور اس نے 13ہزار پاﺅنڈ (تقریباً 24لاکھ 76ہزار روپے)کی لاگت سے ایسی چھاتیاں لگوائیں ہیں جو ’اِن فلیٹ ایبل‘ (Inflatable) ہیں اور کسی بھی وقت چھوٹی یا بڑی کی جا سکتی ہیں۔

رپورٹ کے مطابق اس 27سالہ خاتون کا نام آئیوانا ولادیسلاوا ہے جو جرمنی کے دارالحکومت برلن کی رہائشی ہے۔ اس نے 11سال کی عمر سے ہی جنس تبدیل کرانی شروع کر دی تھی اور نسوانی ہارمون کی گولیاں کھانی شروع کر دی تھیں۔ 18سال کی عمر کو پہنچ کر اس نے سرجری کروانی شروع کی اور متعدد آپریشن کروانے کے بعد مکمل عورت بن گئی۔ وہ دنیا کی پہلی عورت ہے جس نے یہ ’اِن فلیٹ ایبل‘ چھاتیاں لگوائی ہیں جو پھول کر انتہائی بڑی ’پی کپ‘ سائز کی ہو جاتی ہیں اور کم ہو کر نارمل ’جے کپ‘ سائز میں آ جاتی ہیں۔

آئیوانا کا کہنا تھا کہ ”میری خواہش تھی کہ میری چھاتیاں اتنی بڑی ہوں، جتنی بڑی ہونا ممکن ہو سکے۔ چنانچہ میں نے یہ چھاتیاں امپلانٹ کروا لیں جو پانی والے غبارے جیسی ہیں، ان میں سیلین سالوشن بھرا جاتا ہے۔ میں جب چاہوں چھاتی میں سوئی چبھو کر انہیں چھوٹا کر لیتی ہوں اور جب چاہوں سیلین سالوشن بھر کر انہیں دوبارہ بڑا کر لیتی ہوں۔“

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...