پیپلز پارٹی نے سندھ کیساتھ سوتیلی ماں جیسا سلوک کیا ہے، مصطفی کمال

      پیپلز پارٹی نے سندھ کیساتھ سوتیلی ماں جیسا سلوک کیا ہے، مصطفی کمال

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر) پاک سر زمین پارٹی کے چیئرمین سید مصطفی کمال نے ٹھٹھہ میں ایک ہی خاندان کے سات بچوں کی دریائے سندھ میں ڈوب کر ہلاکت پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کیا ہے۔ اپنے ایک بیان میں انہوں نے کہا کہ ہر سال اربوں روپے صحت کی مد میں مختص کرنے کے باوجود سندھ حکومت ان بچوں کو ایمبولینس تک فراہم نہیں کر سکی۔ پیپلز پارٹی نے سندھ کیساتھ سوتیلی ماں جیسا سلوک کیا ہے، سندھ میں بچے بھوک، کتے کے کاٹنے اور ایمبولینس نا ملنے کے سبب زندگیوں سے محروم ہورہے ہیں۔ ان تمام بچوں کی موت کی زمہ داری سندھ حکومت پر عائد ہوتی ہے۔ مصطفی کمال نے مزید کہا کہ انتظامیہ کی غیر موجودگی کے باعث نہروں، دریاں اور ساحل سمندر پر ہر سال اس طرح کے افسوس ناک واقعات کا رونما ہونا معمول بن چکا ہے اور سندھ حکومت لوگوں کی جان و مال کے تحفظ کیلئے بری طرح ناکام ہو گئی ہے، انہوں نے کہا کہ یہ جانتے ہوئے بھی کہ دریائے سندھ میں آج کل طغیانی ہے اسکے باوجود حکومت کی جانب سے کوئی حفاظتی انتظامات نہیں کیے گئے۔ مصطفی کمال نے بچوں کو ایمبولینس نا ملنے کے واقعے کی شفاف تحقیقات کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ غیر فعال انتظامیہ کی سرزنش اشد ضروری ہے تاکہ آئندہ اس طرح کے المناک حادثات کے نتیجے میں معصوم بچوں اور جوانوں کی قیمتی جانیں ضائع ہونے سے بچائی جا سکیں۔ انہوں نے اس المناک حادثے میں جانبحق بچوں کے خاندان سے تعزیت کا اظہار کرتے ہوئے مرحومین کی مغفرت اور پسماندگان کیلئے صبر جمیل کی دعا بھی کی۔

مزید :

صفحہ آخر -