جتنی چاہیں یہ چیز درآمد کریں، حکومت کانجی شعبے کو کھلی چھٹی دینے کا فیصلہ

جتنی چاہیں یہ چیز درآمد کریں، حکومت کانجی شعبے کو کھلی چھٹی دینے کا فیصلہ
جتنی چاہیں یہ چیز درآمد کریں، حکومت کانجی شعبے کو کھلی چھٹی دینے کا فیصلہ

  

اسلام آبا(ڈیلی پاکستان آن لائن)وفاقی حکومت نے نجی شعبے کو لامحدود گندم درآمد کرنے کی اجازت دینے کا فیصلہ کیا ہے اور اس کی درآمد پر عائد ساٹھ فیصد ریگولیٹری ڈیوٹی بھی ختم کردی ہے۔

ڈان نیوز کے مطابق گندم کی درآمداور قابل اطلاق چھ اور دو فیصد اضافی ڈیوٹی ختم کرنے کا فیصلہ وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت ہونے والے اجلاس میں ہوا ہے۔

اجلاس کو ملک کی گندم کی ضروریات سے نمٹنے کے اقدامات اور آٹے کی قیمت پر قابو پانے کے بارے میں تبادلہ خیال کرنے کے لیے طلب کیا گیا تھا جس میں گندم کی بین الصوبائی نقل و حمل پر پابندی ختم کرنے کا بھی فیصلہ کیا گیا تاکہ اس کی ملک میں مناسب دستیابی کو یقینی بنایا جاسکے۔

فیصلہ کیا گیا کہ حکومت گندم اور آٹے کی اسمگلنگ کو روکے گی اور ذخیرہ اندوزوں پر کریک ڈاؤن کا آغاز کرے گی۔

 سیکریٹری قومی فوڈ سیکیورٹی اینڈ ریسرچ عمر حامد خان کےمطابق اب تک تقریبا 2 کروڑ 05 لاکھ ٹن کی کٹائی ہوچکی ہےجبکہ سال گندم کی پیداوار تقریبا 2 کروڑ 07 لاکھ ٹن متوقع ہے۔انہوں نے کہا کہ نجی شعبے کے ذریعہ گندم کی درآمد ضرورت پر مبنی ہوگی، ملک میں گندم کی کمی نہیں ہوگی۔

مزید :

قومی -