” اگرلڑکیوں اوران کے شوہروں کوکچھ ہوا توسب ذمہ دارہوں گے“اسلام آبادہائیکورٹ کے پسندکی شادی کرنیوالی 2 بہنوں کی تحفظ فراہمی کی درخواست پر ریمارکس

” اگرلڑکیوں اوران کے شوہروں کوکچھ ہوا توسب ذمہ دارہوں گے“اسلام ...
” اگرلڑکیوں اوران کے شوہروں کوکچھ ہوا توسب ذمہ دارہوں گے“اسلام آبادہائیکورٹ کے پسندکی شادی کرنیوالی 2 بہنوں کی تحفظ فراہمی کی درخواست پر ریمارکس

  

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)اسلام آبادہائیکورٹ نے پسندکی شادی کرنیوالی 2 بہنوں کی تحفظ فراہمی کی درخواست پردونوں لڑکیوں کوبے نظیرکرائسزسینٹرمنتقلی کاحکم دیدیا۔عدالت نے کہاہے کہ اگرلڑکیوں اوران کے شوہروں کوکچھ ہوا توسب ذمہ دارہوں گے۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد ہائیکورٹ میں پسندکی شادی کرنیوالی 2 بہنوں کی تحفظ فراہمی کی درخواست پر سماعت ہوئی ،چیف جسٹس اطہر من اللہ نے درخواست پر سماعت کی،متاثرہ لڑکی کاکہنا ہے کہ پسندکی شادی پرلودھراں میں شوہرکوجرگے نے قیدکرلیاہے۔

سرکاری وکیل نے کہاکہ کیس پنجاب کا ہے وہاں بھیج دیں،عدالت نے کہاکہ پنجاب میں تحفظ دیاجارہاتوکیاانہیں بے یارومددگار چھوڑدیں۔عدالت نے استفسار کیاکہ پولیس نے دونوں بہنوں کے تحفظ سے متعلق کیاتفتیش کی؟،اسلام آبادپولیس نے کہاکہ دونوں لڑکیوں کامیڈیکل کرایااورشیلٹرہوم منتقل کیا،عدالت نے کہاکہ اگرلڑکیوں اوران کے شوہروں کوکچھ ہوا توسب ذمہ دارہوں گے۔

عدالت نے آئی جی اسلام آباد کومکمل تحقیقات کرنے کاحکم دیتے ہوئے کہاکہ ایس ایس پی 10 جون کودرخواست پررپورٹ پیش کریں،عدالت نے دونوں لڑکیوں کوبےنظیرکرائسزسینٹرمنتقلی کاحکم دیدیا۔

مزید :

علاقائی -اسلام آباد -