یوسی 130کوٹ لکھپت منشیات کی بھرمار ،شریف شہری تنگ

یوسی 130کوٹ لکھپت منشیات کی بھرمار ،شریف شہری تنگ

لاہور (الیکشن سیل) یوسی 130کوٹ لکھپت کے علاقہ عاشق سٹریٹ میں اوباش لوگوں کے آنے جانے کی وجہ سے علاقہ کے لوگوں کا جینا محال ہوگیا ہے یہاں پر منشیات فروشی کا دھندہ عام ہے آئے دن مختلف قسم کے جرائم کی وجہ سے علاقہ کے لوگ بہت پریشان ہیں۔ علاقہ کے لوگوں کا کہنا تھا کہ یہاں پر پینے کا پانی صاف نہیں آتا اور جو پانی آتا ہے اس میں گٹر کا گندہ پانی شامل ہوتا ہے اور اتنی بدبو آتی ہے کہ پینا تو دور کی بات اسے ہاتھ دھونے کو بھی جی نہیں کرتا اور گیس کا تو کوئی نام ونشان نہیں ہے۔ اگر چوبیس گھنٹوں میں سے دو تین گھنٹے آتی ہے تو وہ بھی پریشر اتنا کم ہوتا ہے کہ چولہا بھی نہیں جلتا۔ یوسی 130کے رہائشی بہت پریشان ہیں اور ان کا کہنا ہے اگر ہمارے مسائل حل نہیں کئے گئے تو ہم آئندہ الیکشن میں کسی بھی ایم پی اے یا ایم این اے کو ووٹ نہیں دیں گے۔ کوٹ لکھپت کے رہائشی ذوالفقار ایڈووکیٹ کا کہنا تھا کہ پانی کے مسئلہ کے لئے ہم نے کتنی بار ایم پی اے کو شکایت کی ہے لیکن کوئی عمل درآمد نہیں ہوا اور کئی بار واسا کو بھی درخواستیں جمع کروائی ہیں لیکن وہ بھی کسی نے نہیں سنی اور ہمارے ایم این اے کا تو پوچھے ہی مت جب بھی ان سے ملنے جاتے ہیں تو گھر سے جواب ملتا ہے کہ وہ گھر سے باہر نکلے ہیں ہمیں پتہ نہیں چلتا کہ گھر میں رہتے کب ہیں۔ منیر احمد کا کہنا تھا کہ یہاں پر صفائی کا اتنا بُرا حال ہے کہ جگہ جگہ گندگی کے ڈھیر لگے ہوئے ہیں۔ پہلے ایک مہینے میں لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی والے مہینے میں دو تین چکر لگالیتے تھے لیکن اب وہ بھی نہیں آئے ان کو بھی آتے ہوئے عرصہ گزرگیا ہے۔ محمد یعقوب کا کہنا تھا کہ عاشق سٹریٹ میں اور منشیات فروش وہ رات کو فلیٹ کے چھت پر چڑھ کر خوب چرس، ہیروئن اور مختلف قسم کا نشہ کرتے ہیں اور ہماری چھتیں بھی ساتھ ہیں وہاں سے ہمارے گھروں میں جھانکتے ہیں جس کی وجہ سے ہماری فیملی گھروں سے باہر نہیں نکل سکتی۔ پہلے بھی ایک دفعہ اہل علاقہ نے بڑی محنت کرکے ان فلیٹوں سے جرائم پیشہ لوگوں کا خاتمہ کروایا تھا۔ محمد سہیل کا کہنا تھا کہ یہاں پر گٹر اکثراوقات بند رہنے کی وجہ سے گلیوں میں پانی بھر جاتا ہے جس کی وجہ سے گزرنے میں بہت پرابلم آتی ہے۔ محمد سرور کا کہنا تھا کہ مہربانی کرکے یہاں سے گندگی کے ڈھیر ختم ہوجائیں تو ہمیں کم از کم بدبو سے تو نجات مل جائے گی۔ محبوب احمد کا کہنا تھا کہ ہم قبرستان کی وجہ سے بہت پریشان ہیں کیونکہ اس میں منشیات اکثر اوقات بیٹھے رہتے ہیں اور اگر کوئی آدمی قبر پر دعا مانگنے جاتا ہے تو وہ پاس آجاتے ہیں اور پریشان کرتے ہیں وہ سمجھتے ہیں کہ یہ گاہک ہے جو منشیات خریدنے آرہا ہے ایک تو ان کو یہاں سے ختم کردیا جائے اور دوسرا قبرستان میں جگہ نہیں ہے قبر بنانے کیلئے بالکل جگہ نہیں ہے تو یہاں پر پکی قبر بنانے پر پابندی لگائی جائے ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1