لبریشن فرنٹ جلسے کے اختتام پر فورسز اور مشتعل شہریوں کے درمیان جھڑپ

لبریشن فرنٹ جلسے کے اختتام پر فورسز اور مشتعل شہریوں کے درمیان جھڑپ

  

سری نگر(کے پی آئی) جنوبی کشمیر کے قصبے اننت ناگ میں لبریشن فرنٹ جلسے کے اختتام پر فورسز اور مشتعل شہریوں کے درمیان جھڑپ ہوئی ، مشتعل نوجوانوں کے پتھراوور پر تششد جھڑپوں میں ایس ایچ اؤ سمیت متعدد افراد زخمی ہوئے ۔ قصبہ میں فرنٹ جلسے کے فورا بعد اس وقت افراتفری اور اتھل پتھل مچ گئی جب نوجوانوں نے ڈی سی آفس کی عمارت پر پتھراؤ کیا ۔ پتھراؤ کے نتیجے میں ڈی سی آفس میں موجود متعدد گاڑیوں کے شیشے چکنا چور ہوئے جبکہ نوجوانوں نے فورسز پر بھی پتھراؤ کیا ۔ اس موقعہ پر فورسز نے مشتعل نوجوانوں کو تتر بتر کرنے کیلئے لاٹھی چارج کے ساتھ ساتھ ٹیر گیس شلنگ کی جس کے ساتھ ہی طرفین کے مابین شدید جھڑپوں کا سلسلہ شروع ہوا جو کئی گھنٹوں تک جاری رہا۔طرفین کے مابین قصبے میں ہوئی جھڑپوں کے نتیجے میں ایس ایچ اؤ صدر عادل احمد سمیت کئی افراد کو چوٹیں آئیں پتھراؤ اور ٹیر گیس شلنگ کے نتیجے میں قصبہ کے لالچوک اور اس کے گردونواح علاقوں میں اتھل پتھل مچ جانے کے ساتھ ہی دکانیں آنا فانا بند ہوئیں جس کے نتیجے میں کئی گھنٹوں تک ان علاقوں میں کاروباری سرگرمیاں متاثر ہوئیں۔

مزید :

عالمی منظر -