مغرب دنیا میں اسلام کی پھیلتی ہوئی دعوت سے بوکھلاہٹ کا شکار ہے ،حافظ سعید

مغرب دنیا میں اسلام کی پھیلتی ہوئی دعوت سے بوکھلاہٹ کا شکار ہے ،حافظ سعید

  

 فیصل آباد(بیورورپورٹ)امیر جماعۃ الدعوۃ پروفیسر حافظ محمد سعید نے کہا ہے کہ فتنہ تکفیر عالم اسلام کے خلاف بہت بڑی سازش ہے۔ باہمی لڑائی اور قتل و غارت گری سے صلیبیوں و یہودیوں کو اسلام ومسلمانوں کے خلاف پروپیگنڈا کا موقع مل رہا ہے۔مغربی ممالک دنیا بھر میں اسلام کی پھیلتی ہوئی دعوت سے بوکھلاہٹ کا شکار ہیں۔ وہ مرکز خیبر میں جماعۃالدعوۃ کے زیر اہتمام علماء کنونشن سے خطاب کر رہے تھے۔ اس موقع پر جماعۃالدعوۃ کے مرکزی رہنما حافظ عبدالسلام بن محمد، مولانا امیر حمزہ، مولانا سیف اللہ خالد، مفتی عبدالرحمن عابد، قاری محمد یعقوب شیخ، محبوب الزماں بٹ، فیاض احمد، مولانامحمد اسحاق و دیگر نے بھی خطاب کیا۔ کنونشن میں ضلع بھر سے سینکڑوں علماء کرام نے شرکت کی۔جماعۃالدعوۃ کے سربراہ حافظ محمد سعید نے اپنے خطاب میں کہاکہ پاکستان اللہ تعالیٰ نے مسلمانوں کو نعمت کے طور پر دیا۔افغانستان میں مسلمانوں کی قربانیوں کے نتیجہ میں روس کے وہ ممالک جن پراس نے قبضہ کر رکھا تھا دوبارہ آزاد ہوئے۔ فرانس اور برطانیہ مشرق وسطیٰ سے نکل تو گیا لیکن وہ مطمئن تھا کہ ہمارے نظاموں کو چلانے والے موجود ہیں۔بھارت، امریکہ اور ان کے اتحادی اس وقت سب سے زیادہ خطر ہ پاکستان سے محسوس کرتے ہیں۔ انہیں اب خطرہ ہے کہ جو نظام ہم نے بنائے تھے وہ اب ختم ہورہے ہیں۔ حافظ محمد سعید نے کہاکہ علماء کرام انبیاء کے وارث ہیں‘ وہ موجودہ دور کے فتنوں و سازشوں کو سمجھ کر ان سے خود بھی بچیں‘ قوم کے نوجوانوں کو بچانے کیلئے کردار ادا کریں اور ان کی بہترین ذہن سازی کریں کہ وہ ان فتنوں سے بچ سکیں۔ہمیں فتنہ تکفیر کا رد کرکے کہ ان مسائل کو حل کرنا ہے۔ انہوں نے کہاکہ روس کی طرح امریکہ اور اس کے اتحادیوں کو بھی افغانستان میں شکست کا سامنا کرنا پڑا ہے۔اللہ تعالیٰ مسلمانوں کو کامیابیوں سے نواز رہا ہے۔وہ وقت قریب ہے جب کشمیر، فلسطین و دیگر خطوں کے مسلمان آزاد فضا میں سانس لے سکیں گے۔ حافظ سعید

مزید :

صفحہ آخر -