دنیا کی سب سے بڑی تصویر میں چھپا شرمناک راز سامنے آگیا

دنیا کی سب سے بڑی تصویر میں چھپا شرمناک راز سامنے آگیا
دنیا کی سب سے بڑی تصویر میں چھپا شرمناک راز سامنے آگیا

  


بیجنگ(مانیٹرنگ ڈیسک) چین میں جدید ترین کیمرے سے بنائی گئی دنیا کی سب سے بڑی تصویر میں چھپی ایک شرمناک چیز بھی سامنے آ گئی ہے۔ برطانوی اخبار”ڈیلی سٹار“ کی رپورٹ کے مطابق یہ تصویر چین کے شہر شنگھائی کی کئی عمارتوں کا احاطہ کرتی ہے۔ یہ تصویر 24.9ارب پکسل (Pixel) کے کیمرے سے بنائی گئی ہے، یعنی اس کا حقیقی سائز بلندی میں ایک کلومیٹر اور چوڑائی میں 2کلومیٹر ہے۔ اسے زوم ان کر کے تصویر میں موجود عمارتوں کے کسی چھوٹے سے نکتے کو بھی دیکھا جا سکتا ہے۔ ان عمارتوں میں پوڈونگ شنگری لا ہوٹل (Pudong Shangri-La Hotel) کی بلڈنگ بھی شامل ہے۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

جب یہ تصویر انٹرنیٹ پر آئی اور لوگوں نے اسے زوم ان کرکے اس کے مختلف حصوں کو بغور دیکھنا شروع کیا تو انکشاف ہوا کہ اس ہوٹل کی ایک کھڑکی میں ایک برہنہ شخص کھڑا اپنے فون پر کسی سے بات کر رہا تھا۔ اس شخص نے اپنی ایک ٹانگ دیوار کے اوپر رکھی ہوئی تھی۔ یہ حسن اتفاق انتہائی مضحکہ خیز ہے کہ اس وقت نہ تو تصویر بنانے والے کو علم تھا کہ اس کی تصویر میں ایک برہنہ شخص بھی آ رہا ہے اور نہ ہی اس شخص کو معلوم تھا کہ کئی کلومیٹر دور سے دنیا کی سب سے بڑی تصویر بنائی جا رہی ہے، جس کا وہ خود بھی حصہ بننے جا رہا ہے اور پوری دنیا اسے اس حالت میں دیکھے گی۔

روزنامہ پاکستان کی خبریں اپنے ای میل آئی ڈی پر حاصل کرنے اور سبسکرپشن کیلئے یہاں کلک کریں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس