پنجاب پیرا میڈیکل سٹاف ایسوسی ایشن کا کل سے احتجاجی تحریک کا اعلان

پنجاب پیرا میڈیکل سٹاف ایسوسی ایشن کا کل سے احتجاجی تحریک کا اعلان

لاہور( جنرل رپورٹر) پنجاب پیرا میڈیکل سٹاف ایسوسی ایشن حکومت پنجاب کی جانب سے بار بار وعدوں سے تنگ آ گئی،مطالبات منظور نہ ہونے پر 9 مارچ سے سرکاری ہسپتالوں کو بند کرنے کا اعلان کردیا۔ پہلے مرحلے میں 9 مارچ کو سروسز ہسپتال کے ایم ایس آفس کا گھیراؤ کیا جائے گا اور اگلے دن یعنی 10 مارچ کو پرنسپل آفس کے سامنے احتجاج کیا جائے گا۔ اس کا فیصلہ پنجاب پیرا میڈیکل سٹاف ایسوسی ایشن کے گزشتہ روز ہونے والے ایک اجلاس میں کیا گیا جس کی صدارت صوبائی چیئرمین یوسف بلا نے کی۔اجلاس میں ایسوسی ایشن کے عہدیداران جنرل سیکرٹری جاوید بھٹی، ارشد بٹ میڈیا ایڈوائزر،اکمل، فیاض، راشد گجر، لیاقت مسیح، رانا مالک، رشید مغل،راشد محمود دیگر سرکاری ملازمین نے شرکت کی۔ اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے صوبائی چیئرمین یوسف بلا نے کہا کہ چند مطالبات منظور اور پورے ہونے ابھی باقی ہیں جن سے متعلق حکومتی نمائندے بار بار وعدے کرنے کے باوجود ان پر عملدرآمد نہیں کیا جا سکا۔مطالبات میں ڈیلی ویجز اور ورک چارج ملازمین کی تنخواہیں بڑھانا، نکالے گئے ملازمین کی بحالی اور تنخواہ دی جانا، خالی سیٹوں پر پہلے سے کام کرنے والے ملازمین کو پروموٹ کیا جائے، 20 فیصد کوٹہ دینے کے لئے کمیٹی بنائی جانا سمیت دیگر مطالبات ہیں جن پر تاحال عمل درآمد نہیں کیا گیا، اس موقع پر میڈیا ایڈوائزر ارشد بٹ نے کہا کہ محکمہ صحت کے حکام اور سروسز ہسپتال کی انتظامیہ کو بار بار یادہانیوں کے باوجود انتظامیہ کے کان پر جوں تک نہیں رینگ رہی، اگر 9 مارچ (کل) تک مطالبات منظور اور ان پر عملدرآمد نہ کروایا گیا تو پیرا میڈیکل ایسوسی ایشن شدید احتجاج پر مجبور ہو گی، جس میں 9 مارچ کو ایم ایس آفس کا گھیراؤ اور 10 مارچ کو پرنسپل سمز کے دفتر کے سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا جائے گا ، اس احتجاجی مظاہرے میں تمام ملازمین شرکت کریں گے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1