طبقاتی نظام تعلیم ترقی کی راہ میں بڑی رکاوٹ ہے، راغب حسین نعیمی

طبقاتی نظام تعلیم ترقی کی راہ میں بڑی رکاوٹ ہے، راغب حسین نعیمی

لاہور(نمائندہ خصوصی ) معروف دینی اسکالر وناظم اعلیٰ جامعہ نعیمیہ علامہ ڈاکٹر محمدراغب حسین نعیمی نے کہاہے کہ مذہبی انتہاء پسندی اورلبرل انتہاء پسندی دونوں انسانیت کیلئے زہرقاتل ہے۔طبقاتی نظام تعلیم ترقی کی راہ میں بڑی رکاوٹ ہے۔انسانیت کی تعمیر تعلیم کابنیادی مقصدہوناچاہیے۔کسی بھی ملک و قوم کی ترقی کا باعث اس کے قابل اور ہنر مند افراد ہوتے ہیں ۔دور حاضر میں وہی اقوام ترقی کر رہی ہیں جو اپنے مروجہ نظام تعلیم میں فنی تعلیم کی مسلمہ حقیقت کا ادراک رکھتی ہیں۔ماڈل قوم بننے کے لئے ضروری ہے کہ اسلام کے متعین کئے ہوئے بنیادی انسانی حقوق کی پاسداری کی جائے۔نوجوانوں کابہتر اخلاق اورانسانی اقدارکاحامل ہونا لازمی ہے۔ نسل نو کو جدید علوم سے آراستہ کئے بغیر ترقی اور خوشحالی کا خواب کبھی شرمندہ تعبیر نہیں ہوسکتا۔ان خیالات کااظہارانہوں نے گزشتہ روزمیڈیافاؤنڈیشن کے زیراہتمام مقامی ہوٹل میں جدید طریقہ تعلیم کے حوالے سے منعقدہ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔تقریب سے حافظ نصیر احمدنورانی (ناظم اعلیٰ المرکز الاسلامی لاہور) ڈاکٹر محمدسلیمان قادری ،عظمت عباس سمیت دیگر مسالک کے مدارس کے ناظمین نے بھی خطاب کیا۔

جبکہ دینی مدارس کے اساتذہ اورمعلمات کی کثیر تعد ادنے شرکت کی۔علامہ راغب نعیمی نے مزید کہاکہ فروغ تعلیم میں مدارس دینیہ انتہائی اہم کردار ادا کر رہے ہیں۔دینی مدارس میں زیر تعلیم طلباء کوجدید علوم سے آراستہ کرنا وقت کی اہم ضرورت ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4