’بدھ کا دن ترکی اور یورپ کیلئے انتہائی خطرناک کیونکہ۔۔۔‘ پیرس حملوں کی پیشگوئی کرنے والے نجومی نے ایک مرتبہ پھر بڑی تباہی کی خبر دے دی

’بدھ کا دن ترکی اور یورپ کیلئے انتہائی خطرناک کیونکہ۔۔۔‘ پیرس حملوں کی ...
’بدھ کا دن ترکی اور یورپ کیلئے انتہائی خطرناک کیونکہ۔۔۔‘ پیرس حملوں کی پیشگوئی کرنے والے نجومی نے ایک مرتبہ پھر بڑی تباہی کی خبر دے دی

  


لندن(مانیٹرنگ ڈیسک) پیرس میں دہشت گردی کے حملوں کی پیش گوئی کرنے والے برطانوی نجومی پیٹر سٹاکنگر(Peter Stockinger) نے اب ترکی اور یورپ کے لیے انتہائی بری پیش گوئی کر دی ہے۔ پیٹر کا کہنا ہے کہ ”بدھ کا دن ترکی اور یورپ کے لیے انتہائی خطرناک ہے۔ اس روز سورج گرہن لگنے جا رہا ہے اور اس گرہن سے یورپ اور ترکی میں کوئی تباہ کن قدرتی آفت آ سکتی ہے اور ان ممالک کی کسی اہم شخصیت کا قتل بھی ہو سکتا ہے۔9مارچ بروز بدھ کو سیارے کسی خاص واقعے کے لیے ایک قطار میں آ رہے ہیں۔ “برطانوی اخبار ”دی مرر“ کی رپورٹ کے مطابق ان علاقوں میں سورج گرہن بدھ کے روز صبح کے اوقات میں لگے گا۔

مزید جانئے: 10 سال بعد امریکہ ،چین اور روس کی کیا حالت ہو گی ؟دنیا کے مستقبل کے بارے میں انتہائی تہلکہ خیز پیشن گوئیاں

ماہرین کے مطابق بدھ کو لگنے والا سورج گرہن سیرو زسیریز130(Saroz Series 130)کا حصہ ہے۔ اس سیریز کے تحت سورج گرہن 1096ءمیں لگنے شروع ہوئے تھے اور یہ 2394ءتک جاری رہے گی۔سیروز (Saroz)وقت کے تعین کے ایک پیمانے کا نام ہے جس کے ذریعے سورج اور چاند گرہن کا اندازہ لگایا جاتا ہے۔ ایک سیروز 18سال 11دن اور 8گھنٹے پر محیط ہوتا ہے۔ پیٹر کا کہنا ہے کہ ”بدھ کے روز زیادہ تر مصر، اٹلی، سپین، ترکی، آرمینیا، فرانس، پرتگال اور جرمنی اس ممکنہ تباہی سے دوچار ہو سکتے ہیں۔“ واضح رہے کہ پیٹر نے گزشتہ سال 13ستمبر کو لگنے والے سورج گرہن پر کسی بڑے سانحے کی پیش گوئی کی تھی جو 13نومبر کو پیرس حملوں کی صورت میں رونما ہوئی۔

مزید : ڈیلی بائیٹس


loading...