رضا ربانی کی متعارف کردہ روایات قابل تقلید: راجہ ظفر الحق

رضا ربانی کی متعارف کردہ روایات قابل تقلید: راجہ ظفر الحق

اسلام آباد( آئی این پی ) سینیٹ میں قائد ایوان راجہ محمد ظفرالحق نے کہا ہے ہمارے معاشرے میں بہت سارے مسائل عدم برداشت کی وجہ سے جنم لے رہے ہیں ، ضرورت اس بات کی ہے کہ جمہوری روایات کو فروغ دیتے ہوئے صبر و حوصلے کیساتھ ایک دوسرے کو سننے اور ڈا ئیلاگ کے ذریعے مسائل حل کرنے پر توجہ دی جائے، میاں رضاربانی نے بطور چیئرمین سینیٹ جو روایات متعارف کرائی ہیں وہ بعد میں آنیوالوں کیلئے مشعل راہ ثابت ہو نگی۔ گزشتہ روز چیئرمین سینیٹ رضاربانی اور اراکین سینیٹ کے اعزاز میں دیئے گئے عشائیہ سے خطاب میں انکا مزید کہنا تھا ایوان بالا ایک کنبہ ہے اور اس کا اپنا ایک مزاج ہے جو اسے منفرد بنتا ہے۔ میاں رضا ربانی کی قیادت میں ایوان بالاء کی کارکردگی میں بہتری کے علاوہ ایوان کے اندر ایک منفرد نظم و ضبط دیکھنے میں آیا۔ انہوں نے چیئرمین سینیٹ اور ریٹائرڈ ہونیوالے اراکین سینیٹ کیلئے نیک خواہشات کا اظہار بھی کیا۔

اسلام آباد( آئی این پی ) چیئرمین سینٹ میاں رضاربانی نے کہا ہے کسی بھی ادارے کے ملازمین ادارے کیلئے ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت ر کھتے ہیں،ملازمین کی فلاح و بہبود اور حقوق کا تحفظ کرنا ادارے کا بنیادی فرض ہوتا ہے، ایوان بالا واحد ادارہ ہے جس نے ملازمین کی فلاح و بہبود ،حقوق کی فراہمی اور قانونی تحفظ کے حوالے سے قانون سازی کی اور قواعد مرتب کرکے ان کا نفاذ عمل میں لایاگیا۔ گزشتہ روزایوان بالا کے سٹاف کے اعزاز میں دیئے گئے ظہرانے سے خطاب کرتے ہوئے رضاربانی کا مزید کہنا تھا جب سے چیئرمین کا منصب سنبھالا ملا ز مین، خاص طور پر نچلے درجے کے ملازمین جو مختلف مسائل کا شکار تھے پرخصوصی توجہ دی گئی اورتین سال کے دوران کافی حد تک ان کی مشکلا ت کو نہ صرف دو رکیا بلکہ ان کی فلاح وبہبود کی راہ میں حائل رکاوٹیں بھی ختم کی گئیں اور اس حوالے سے ہر ممکن اقدام اٹھایا گیا۔ بیسمنٹ میں کام کرنیوالے سینٹ کے کچھ ملازمین کو تو سی بلاک منتقل کردیا گیا ہے جبکہ اگلے تین ماہ میں باقی سٹاف بھی وہاں سے منتقل ہوجائے گا۔ انہوں نے سیکرٹری اور سٹاف کو سینٹ کی کارروائی کو زیادہ سے زیاد ہ موثر بنانے کے حوالے سے بھرپور تعاون پر شکریہ اداکیااور کہا کہ بے شمار حقدار سٹاف کو اگلے گریڈ میں پروموشن دیدی گئی ہے۔ امید ہے نئے آنیوالے چیئرمین و ڈپٹی چیئرمین سینٹ بھی سٹاف کی فلاح وبہبود و قانونی تحفظ کا خیال رکھیں گے۔

مزید : صفحہ آخر