خواتین کو مساوی حقوق دیے بغیر ترقی کا حصول ممکن نہیں ،مصطفی کمال

خواتین کو مساوی حقوق دیے بغیر ترقی کا حصول ممکن نہیں ،مصطفی کمال

کراچی(اسٹاف رپورٹر)پاک سر زمین پارٹی کے چیئر مین سید مصطفی کمال نے کہاکہ عورتوں کو مساوی حقوق دیے بغیر ترقی کا حصول ممکن نہیں، خواتین کے عالمی دن کے موقع پر اپنے پیغام میں انہوں نے کہا کہ خواتین پاکستان کی نصف آبادی پر مشتمل طبقہ ہے جو نہ صرف بر ی طرح نظر انداز کیا گیا بلکہ معاشی، معاشرتی، سماجی، نفسیاتی، علمی،ادبی غرض ہے کہ ہر سطح پر ہر جہت میں اسے نظر انداز کیا جارہاہے انہوں نے کہاکہ خواتین پر مظالم کا دراز سلسلہ بھی ہمارے بہت سے مسائل کی جڑ ہے، خواتین کو گھروں میں مظالم، اور استحصال کا سامناہے، انپر عائد غیر انسانی پابندیاں اور انکے حقوق سلب کر لینا عام ہے، گھریلو تشدد مختلف سماجی طبقات میں کارو کاری، ونی کرنے چلڈ میرج، اس استحصالی کی سادہ مثالیں ہے، تعلیم یافتہ، اور حقوق و فرائض سے آگاہ خواتین نہ صرف آج ہماری قوم کی ضرورت بلکہ مستقبل میں بھی ہماری نسلوں کے سدھار اور ہمار عظمت کا شعور اجاگر کرنے میں خواتین کے کردار سے صرف نظر ممکن نہیں،انہوں نے کہاکہ موجودہ زمانے میں خواتین زندگی کے ہر میدان میں سر گرم عمل ہیں وہ گھروں میں فیکڑیوں، دفتروں اورتعلیمی اداروں میں ہر جگہ اپنی صلاحتیوں کا لوہامنو ا رہی ہے ، انہوں نے کہاکہ خواتین کے حقوق ضمن میں انکے لئے عزت نفس کی یقینی دہانی، معاشی، جنسی استحصال سے تحفظ، حکومتی اور سماجی اداروں میں برا بری کی بنیادملازمتیں اور تعلیم کا حق شامل ہیں، انہوں نے کہاکہ پاک سر زمین پارٹی مقامی حکومتوں کی سطح پر خواتین حقوق کمیٹیوں کے قیام کی خواہاں ہے، موجودہ تعلیمی نظام میں بنیادی تبدیلیوں کے زریعے صنفی بیداری کو فروغ دیا جائے، تعلیم کے ذریعے خواتین کو بااختیار بنایا جائے، انہوں نے کہاکہ خواتین کی سیاسی شمولیت کو ممکن بنانے کے لئے موجودہ سماجی رکاوٹوں کو دور کرنے ضرورت ہے، قومی سطح پر ایسے تربیتی پرو گرام منعقد کرنے چاہیے جن ذریعے خواتین مارکیٹنگ کے رجحانات کے حوالے معلومات حاصل کر سکیں، وہ خواتین جو تعلیم حاصل نہیں کر پاتیں،انکے کے لئے تعلیم بالغان کا انقعاد ان کے علاقے میں ہی کیا جائے انہوں نے کہاکہ پاک سر زمین پارٹی چاہتی ہے خواتین کو زندگی کے ہر شعبے میں مساوی حقوق اور پر سکون ماحول فراہم کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ حالیہ اقوام متحدہ کی رپورٹ کے مطابق صوبہ سندھ کی خواتین کی صحت کی صورتحال غذائی قلت کی وجہ سے افریقی ممالک سے بھی بد تر ہے،اقوم متحدہ کی رپورٹ کے مطابق سندھ کی 98.6 فیصد خواتین بنیادی صحت اور تعلیمی سہولیات سے محروم ہیں جو کہ حکمرانوں کے لیے لمحہ فکر یہ ہے لہذا پاک سر زمین پارٹی اقتدار میں آکر اپنے منشور کے مطابق عوام کو صحت وتعلیم اور غذائی قلت کے مسا ئل کو بھر پور طریقے سے حل کرے گی

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر