صوابی ،ترکئی کے دو حلقوں میں رد وبدل کرنے پر جواب طلب

صوابی ،ترکئی کے دو حلقوں میں رد وبدل کرنے پر جواب طلب

پشاور(نیوزرپورٹر)پشاورہائی کورٹ کے جسٹس روح الامین اور جسٹس سیدافسرشاہ پرمشتمل دورکنی بنچ نے صوابی ترکئی کے دوحلقوں میں ردوبدل کرنے سے متعلق صوبائی الیکشن کمیشن کے احکامات پرالیکشن کمیشن سے جواب مانگ لیافاضل بنچ نے بیرسٹرگوہرعلی کی وساطت سے دائرسینئرصوبائی وزیرشہرام ترکئی وغیرہ کی رٹ کی سماعت کی اس موقع پر عدالت کو بتایاگیاکہ الیکشن کمیشن آف پاکستان نے تمام حلقہ بندیوں کے حتمی نوٹی فکیشن کے بعداس کے حلقے میں ردوبدل کیاہے اوریونین کونسل ترکئی کو اپنی حدود سے نکال کردوسرے حلقے میں شامل کردیاہے حالانکہ اس حوالے سے الیکشن کمیشن نے انتخابات سے قبل ہی اپنی حتمی منصوبہ بندی مکمل کرلی تھی اوراس کاباقاعدہ اعلامیہ بھی جاری کیاتھامگروہاں بعض افراد نے ان حلقہ بندیوں کوچیلنج کیاتھا ا ورپشاورہائی کورٹ نے تمام کیسزفیصلے کے لئے الیکشن کمیشن کو منتقل کئے تھے انہوں نے عدالت کو بتایاکہ الیکشن کمیشن نے ان تبدیلیوں کے خلاف دائراپیلیں منظورکرتے ہوئے وہاں سابق حلقہ بندیاں بحال رکھیں جوغیرقانونی اقدام ہے جس پرعدالت نے متعلقہ حکام سے جواب مانگ لیا۔

مزید : پشاورصفحہ آخر