دھمکیاں دی جارہی ہیں انصاف دلایا جائے ،شیر بہادر

دھمکیاں دی جارہی ہیں انصاف دلایا جائے ،شیر بہادر

نوشہرہ(بیورورپورٹ)نوشہرہ کے ممتاز قانون دان سماجی شخصیت اور سابق ناظم یونین کونسل چوکی ٹاون شیر بہادر خان اپنے بیٹوں کی طرف سے دیئے گئے اذیتوں اور دھمکیاں سے تنگ آکر اپنی فریاد لیکر نوشہرہ پریس کلب پہنچ گئے میرے بیٹے شیراز بہادر اور شہریار بہادر مجھے اور میری دوسری بیوی کو غلیظ گالیاں اور سنگین نتائج کی دھمکیاں دے رہے ہیں حکومت ، سیاسی جماعتوں کے اکابر اور پولیس تحفظ فراہم کرکے مجھے انصاف دے ان خیالات کا اظہار انہوں نے نوشہرہ پریس کلب میں میڈیا کے ساتھ بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ میں نے اپنا پدری جائیداد فروخت کر اپنے بیٹوں شیراز بہادر اور شہریار بہادر کو اعلیٰ تعلیم دلوائی یہ دن دیکھنے کے لئے کہ وہ میری بے عزتیاں کریں گے انہوں نے کہا کہ سال 2010میں میری بیوی وفات ہو گئی تھی اور بہویں میری خدمت نہیں کرتی تھی اس لئے میں نے اپنی خدمت کی غرض سے دوسری شادی کی جو کہ میرے بیٹوں کو ناگوار گزری اور اس دن سے میرے مخالف ہو گئے یہاں تک کہ انہوں نے مجھے اپنے پدری مکان اور حجرہ سے اسلحہ کی نوک پر بے دخل کر دیا جس کی مالیت 2کروڑروپے سے زیادہ ہے انہوں نے مزید کہا کہ میرا بیٹا شہریار بہادر کے ساتھ اس سازش میں ان کے سالے طاہر شاہد پسران سکندر خان شامل ہیں انہوں نے کہا کہ اگر مجھے یا میری دوسری بیوی کو کچھ ہوا تو انکی ذمہ داری میرے بیٹے شہریار بہادر اور انکے سالوں طاہر اور شاہد پر عائد ہو گی انہوں نے کہا کہ میری جائیداد کے کاغذات میرے پاس ہیں جبکہ مجھ سے اسلحہ کی نوک پر سادہ سٹیپ پیپر پر دستخط لیے گئے تھے لیکن سابق ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر نے وہ سٹیپ پیپر منسوخ کر دئیے تھے انہوں نے کہا کہ میں وزیر اعظم عمران خان عمران خان ،وزیر اعلیٰ محمود خان آئی جی پی ڈاکٹر نعیم ، اور دیگر اعلیٰ حکام سے مطالبہ کرتا ہوں کہ وہ مجھے ان نافرمان بیٹوں سیراز بہادر اور شہریار بہادر سے تحفظ فراہم کرکے انصاف دلائیں بصورت دیگر میں راست اقدام پر مجبور ہو جاوں گا ۔

مزید : پشاورصفحہ آخر