سندھ اسمبلی ، اپوزیشن ارکان کی ایم ایم اے ممبر پر تھپڑوں کی بارش ، ایوان میدان جنگ میں تبدیل

سندھ اسمبلی ، اپوزیشن ارکان کی ایم ایم اے ممبر پر تھپڑوں کی بارش ، ایوان ...

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک)سندھ اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر فردوس شمیم نقوی کیخلاف تحریک استحقاق پیش کرنے پر متحدہ مجلس عمل کے رکن سید عبدالرشید پر اپوزیشن کے بعض ارکان نے حملہ کردیا۔نجی ٹی وی کے مطابق سندھ اسمبلی کا اجلاس ہنگامہ آرائی کی نذر ہوگیا،اپوزیشن جماعتوں میں دراڑ پڑ گئی، ایم ایم اے اور تحریک لبیک کے ارکان اپوزیشن اتحاد سے الگ ہوگئے۔سید عبدالرشید کی جانب سے فردوس شمیم نقوی کیخلاف تحریک استحقاق پیش کی گئی جس کی پیپلزپارٹی نے بھی حمایت کی، تحریک استحقا ق کے متن میں کہا گیا کہ فردوس شمیم نقوی کابیان توہین آمیز ہے۔فردوس شمیم نقوی کے ریمارکس پر سید عبدالرشید کے احتجاج پر پی ٹی آئی، ایم کیوایم اور جے ڈی اے کے ارکان بھڑک اٹھے اور بعض ارکان نے آگے بڑھ کر سید عبدالرشید پر حملہ کردیا، بعض ارکان نے سید عبدالرشید پر تھپڑوں کی بارش کردی، صوبائی وزراء نے سید عبدالرشید کو اپنی حفاظت میں لیا تو اس دوران بعض ارکان گتم گتھا ہوگئے۔حکومتی اور اپوزیشن جماعتوں نے ایک دوسرے کے قائدین کے خلاف زبردست نعرہ بازی کی، اپوزیشن ارکان نے سپیکر ڈیسک کے سامنے کھڑے ہوکراحتجاج کیا اور بعض ارکان نے ایجنڈے کی کاپیاں پھاڑ دیں۔صوبائی وزیر بلدیات سعید غنی نے کہاہے کہ اپوزیشن ارکان نے غنڈہ گردی کرتے ہوئے بد تہذیبی پر مبنی نعرے لگا ئے، جن ارکان نے ہاتھا پائی کی ان کے ایوان میں آنے پر پابندی عائد کی جائے۔

سندھ اسمبلی

مزید : صفحہ آخر