خدمات کی فراہمی پر 50ارب روقپے ٹیکس وصولی کا ہدف حاسل کیا جائیگا : سلیم خان جھگڑا

خدمات کی فراہمی پر 50ارب روقپے ٹیکس وصولی کا ہدف حاسل کیا جائیگا : سلیم خان ...

پشاور( سٹاف رپورٹر)خیبر پختونخوا کے وزیر خزانہ تیمورسلیم خان جھگڑا نے کہا ہے کہ صوبائی حکومت کے اصلاحاتی ایجنڈے اور ٹیکس نظام کی فعالیت کی بدولت آئندہ پانچ برسوں میں خدمات کی فراہمی پر خیبر پختونخوا میں پچاس ارب روپے ٹیکس وصولی کا ہدف حاصل کیا جائے گا ۔ ٹیکس ادا کرنا بوجھ نہیں بلکہ ایک قومی فریضہ ہے یہ بنیادی طور پر عوام کی جانب سے سرمایہ کاری ہے، ٹیکس کا پیسہ عوام کی امانت ہے جو حکومت ان کی فلاح و بہبود کے لئے استعمال میں لانے کی ضامن ہے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے صوبے میں خدمات کی فراہمی پر ٹیکس وصولی کے حوالے سے طلبا ء و نوجوانوں کی آگاہی کے لیے فاسٹ نیشنل یونیورسٹی میں منعقدہ سیمینار کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کیا سیمینار کا انعقاد خیبر پختونخوا ریونیو اتھارٹی اور فاسٹ نیشنل یونیورسٹی نے مشترکہ طور پر کیا تھا۔ سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے وزیرخزانہ کا کہنا تھا کہ گزشتہ کئی دہائیوں سے بہتر ٹیکس نظام نہ ہونے کی وجہ سے صوبے کو مالی وسائل کی کمی کا سامنا ہے انہوں نے کہا کہ صوبے کے محاصل میں اضافے کے لئے ہمیں قومی سوچ اپنا کا اجتماعی قربانی دینی ہوگی صوبائی وزیر نے کہا کہ جب حکومت کے پاس ٹیکس جمع ہو گا تو ا سے نہ صرف عوام کی فلاح و بہبود پر خرچ کیا جا سکے گا بلکہ حکومتی امور کو بھی بہتر بنانے میں مدد ملے گی۔ انہوں نے مزید کہا کہ ٹیکس کوئی خوشی سے ادا نہیں کرتا ٹیکس کلچر کو بدلنا موجودہ وقت کا تقاضا ہے۔ خیبرپختونخوا حکومت ٹیکس نظام پر عوام کا اعتماد بحال کرنے اور ٹیکس ادائیگی کے نظام کو سہل بنانے کے لئے بھرپور اقدامات کر رہی ہے جن کی بدولت عوام کا اعتماد بتدریج بحال ہو رہا ہے ۔ تیمور سلیم نے کہا کہ عوام کے ٹیکس کا پیسہ بہتر انداز میں کام میں لانا حکومت کی ذمہ داری ہے انہوں نے کہا کہ آمدن اور خرچ میں توازن کو برقرار رکھنے کے لئے ٹیکس اصلاحات پر عمل کرنا ناگزیر ہے۔وزیرخزانہ نے کہا کہ صوبے میں خدمات کی فراہمی پر ٹیکس وصولی کے لئے خیبر پختونخوا ریونیو اتھارٹی فعال کردار ادا کر رہا ہے انہوں نے کہا کہ KPRA وقت گزرنے کے ساتھ ساتھ نہ صرف حکومت کی توقعات پر پورا اترے گا بلکہ صوبے کے عوام کو بھی اس ادارے میں کام کرنے والے افراد پر فخر ہو گا انہوں نے کہا کہ KPRA کی استعداد اور فعالیت میں اضافے کیلئے پرائیوٹ سیکٹر سے ٹیکس ماہرین کی خدمات بھی حاصل کی جائیں گی۔ صوبائی وزیرنے عوام پر زور دیا کہ وہ حکومت کی جانب سے خدمات کی فراہمی پر لاگو ٹیکس ادا کرکے اپنے صوبے کو خود مختار بنانے میں اپنا بھرپور کردار ادا کریں ۔سیمینار کے موقع پر خیبر پختونخوا ریونیو اتھارٹی کے ڈائریکٹر جنرل طاہر اورکزئی ٹیکس ایڈوائزر افتخارقطب کے علاوہ طلبہ اور فیکلٹی ممبران بھی موجود تھے بعدازاں صوبائی وزیر خزانہ نے خدمات کی فراہمی پر ٹیکس ادائیگی اور حکومت کی معاشی اصلاحات اور دیگر اقتصادی امور سے متعلق شرکاء کے مختلف سوالات کے تفصیلی جوابات دئیے ،واضح رہے کہ سروسز ٹیکس کی ادائیگی سے متعلق نوجوانوں اور طلبہ کی آگاہی کیلئے دیگر اعلی تعلیمی اداروں میں مزید آگاہی پروگرام منعقد کیے جائیں گے۔

مزید : کراچی صفحہ اول