تجزیہ کار ایاز امیر نے کالعدم جیش محمد اور جماعت الدعوة کو ریاستی اثاثہ بنانے کامشورہ دیدیا

تجزیہ کار ایاز امیر نے کالعدم جیش محمد اور جماعت الدعوة کو ریاستی اثاثہ ...
تجزیہ کار ایاز امیر نے کالعدم جیش محمد اور جماعت الدعوة کو ریاستی اثاثہ بنانے کامشورہ دیدیا

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) تجزیہ کارایاز امیر نے کہاہے کہ کالعدم جیش محمد اور جماعت الدعوة ٹی ٹی پی نہیں ہیں، ان کے حوالے سے احتیاط برتنی ہوگی ، ان کو ریاست پاکستان کا اثاثہ بنناچاہئے۔

دنیا نیوز کے پروگرام ”تھنک ٹینک“ میں گفتگو کرتے ہوئے ایاز امیر نے کہاحکومت کی کاررائیوں پر میں سنجیدگی نہ ہوتی تو حکومت کی جانب سے ایک کالعدم تنظیم کی مسجد اور اداروں کا کنٹرول نہ لیا جاتا لیکن یہ بات سمجھ لینی چاہئے کہ کالعدم جیش محمد اور جماعت الدعوة ٹی ٹی پی نہیں ہیں، ان کے حوالے سے احتیاط برتنی ہوگی ، انتظامیہ جب کنٹرول حاصل کرنے چوبرجی گئی تو وہاں مزاحمت نہیں کی گئی بلکہ تعاون کیا گیا ۔

انہوں نے کہا کہ ان لوگوں کو مین سٹریم میں شامل کرنا چاہئے ، یہ لوگ بڑے ٹرینڈ ہیں ، ان کو ریاست پاکستان کا اثاثہ بنناچاہئے ، اگر کوئی بھول ہوئی تھی کو ان سے نہیں ہوئی تھی بلکہ کہیں اورہوئی تھی ۔

مزید : قومی