مرد اور عور ایک ہی گاڑی کے دوپہیے، مغرب زدہ لوگ اسلامی معاشرے کو تباہ کرنا چاہتے ہیں: سراج الحق

مرد اور عور ایک ہی گاڑی کے دوپہیے، مغرب زدہ لوگ اسلامی معاشرے کو تباہ کرنا ...

  



کراچی (مانیٹرنگ ڈیسک)امیر جماعت اسلامی سراج الحق کا کہنا ہے کہ مرد اور عورت کو آپس میں لڑانے والے خاندانی نظام تباہ کرناچاہتے ہیں، مرد اور عورت ایک ہی گاڑی کے دو پہیے ہیں، مغرب زدہ لوگ اسلامی معاشرے کوتباہ کرنا چاہتے ہیں۔ان خیالات کا اظہار امیر جماعت اسلامی سراج الحق نے کراچی میں خواتین کانفرنس سے خطاب میں کیا۔جماعت اسلامی کے زیراہتمام کراچی کے باغ جناح میں خواتین کانفرنس منعقد کی گئی جس کا نعرہ ”قوم کی عزت ہم سے ہے“رکھا گیا تھا۔خیال رہے کہ عالمی یوم خواتین کے حوالے سے جماعت اسلامی نے 'خواتین کانفرنس‘ منعقد کرنے کا اعلان کیا تھا جبکہ آج مختلف تنظیموں کی جانب سے مختلف شہروں میں 'عورت مارچ' منعقد کیے جائیں گے۔ خواتین کانفرنس سے امیر جماعت اسلامی پاکستان سینیٹر سراج الحق، جماعت اسلامی حلقہ خواتین کی مرکزی جنرل سیکرٹری دردانہ صدیقی اور دیگر خواتین رہنماؤں نے خطاب کیا۔ کانفرنس میں مختلف شعبوں و مکتبہ فکر سے وابستہ خواتین ڈاکٹرز، اساتذہ، وکلاء ، طالبات اور ورکنگ ویمن سمیت شہر بھر سے خواتین شریک ہوئیں۔ خواتین کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے امیر جماعت اسلامی سراج الحق کا کہنا تھا کہ ایسا پاکستان چاہتے ہیں جہاں خواتین کی عزت اور ان کامستقبل محفوظ ہو۔سراج الحق کا کہنا تھا کہ مرد اورعورت کو آپس میں لڑانے والے انسانیت اور خاندانی نظام تباہ کرناچاہتے ہیں، مرد اور عورت ایک ہی گاڑی کے دو پہیے ہیں، مغرب زدہ تھوڑے لوگ اسلامی معاشرے کو یرغمال اور کلچر تباہ کرنا چاہتے ہیں۔امیر جماعت اسلامی کا کہنا تھا کہ خواتین کو وراثت میں ان کا حق دیا جائے اور الیکشن کمیشن ایسے مرد کو الیکشن میں حصہ نہ لینے دے جو اپنی بہن کو وراثت میں حق نہ دے۔ان کا مزید کہنا تھا کہ الیکشن کمیشن ایسے مرد کو الیکشن میں حصہ نہ لینے دے جو بیوی کو حق مہر نہ دے اور مرد امیدواروں سے اپنی بہن کو جائیداد میں حصہ دینے کا سرٹیفکیٹ طلب کیا جائے۔سراج الحق نے مطالبہ کیا کہ ملک بھر میں خواتین کے لیے الگ ٹرانسپورٹ کا نظام بنایا جائے ا ور خواتین ملازمین کو مستقل کیا جائے اور خواتین کو تعلیم کا حق دیا جائے۔انہوں نے مزید مطالبہ کیا کہ شہروں اور دیہات میں خواتین کو صحت کی سہولیات فراہم کی جائیں اور خواتین کو اسپورٹس کی سہولیات فراہم کی جائیں۔

سراج الحق

مزید : صفحہ اول