مغربی طرز پر روایات کی ترغیب دینے کیخلاف پریس کلب سامنے احتجاج

      مغربی طرز پر روایات کی ترغیب دینے کیخلاف پریس کلب سامنے احتجاج

  



پشاور(سٹی رپورٹر)تنطیم اسلامی حلقہ خیبرپختونخوا جنوبی نے معاشرے میں بڑھتی ہوئی بے حیائی اور حقوق نسواں کے نام پر عورتوں سے اسلامی حقوق چین کر انہیں مغربی طرز پر روایات کی ترغیب دینے کے خلاف پشاور پریس کلب سامنے احتجاجی مظاہرہ کیا گیا مظاہرین نے ہاتھوں میں پلے کارڈز اور بینرز اتھا رکھے تھے جس پر بے حیائی کے خلاف نعرے درج تھے مظاہرے کی قیادت تنظیم اسلامی حلقہ خیبر پختونخوا جنوبی کے امیر شمیم خٹک اور دیگر عہدیداران نے کی اس موقع پر مظاہرین کا کہنا تھا کہ اللہ تعالی نے ایک مرد اور ایک عورت سے نسل انسانی کا سلسلہ شروع کیا اور دونوں کے حقوق و فرائض متعین فرما دیے بحثیت انسان مرد اور عورت میں کوئی فرق نہیں البتہ ہر ایک کا دائرہ کار مختلف ہے لیکن مغرب کی دجالی تہذیب نے اس نظام کو پلٹ کر دیا اور مرد و عورت نے اپنے دائرہ کار سے نکل کر دوسرے کے کے دائرہ کار میں داخل ہونے کی کوشش کی اور حقوق اور فرائض کو غیر فطری انداز میں تبدیل کیا جسکی وجہ سے معاشرے میں بے حیائی کا طوفان برپا ہوا۔انہوں نے کہا کہ اجتماعی زندگی کے تین گوشوں میں سے سیاسی،معاشی سطح پر مغرب ہم پر فتح حاصل کر چکا ہ جو ایک تلخ حقیقت ہے جبکہ اس وجہ سے عورتوں کی بے بے پردگی نے حیا کو ایسے کچے جونپڑے میں پناہ لینے پر مجبور کردیا ہے کہ وہ مغرب کی طرف سے اٹھائی گئی آندھیوں اور طوفان کا زیادہ دیر مقابلہ نہ کر سکے اور مغرب نے آج اس محاذ پر سوشل انجیئرنگ پروگرام،دیگر خوشنما ناموں اور پر فریب نعروں کے ساتھ مختلف این جی اوز اور ایجنٹوں کے ذریعے حملہ اور ہوئے ہے۔شرکاء نے کہا کہ ضرورت اس امر کی ہے کہ دینی مدارس و مذہبی جماعتیں امر بالمعروف و نہی عن المنکر کا فریضہ سر انجام دیتے ہوئے مغرب کے اس یلغار کو روکیں اور اپنے معاشرتی نظام کو بچائیں

مزید : پشاورصفحہ آخر