سب سے مہنگی جسم فروش خاتون نے انوکھا کام شروع کردیا

سب سے مہنگی جسم فروش خاتون نے انوکھا کام شروع کردیا
سب سے مہنگی جسم فروش خاتون نے انوکھا کام شروع کردیا

  



نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) امریکہ کی سب سے مہنگی جسم فروش خاتون نے اب سوشل میڈیا کے ذریعے بھی کمائی شروع کر دی۔ ڈیلی سٹار کے مطابق اس خاتون کا نام ایلس لٹل ہے جو امریکی ریاست نیواڈا کی رہائشی اور لائسنس یافتہ جسم فروش خاتون ہے۔اس نے سوشل میڈیا پر بھی کافی تعداد میں مداح اکٹھے کر لیے ہیں اور اب وہ ان پلیٹ فارمز کے ذریعے نہ صرف گاہک تلاش کرتی ہے بلکہ مختلف برانڈز کی تشہیر کرکے بھی رقم کما رہی ہے۔

رپورٹ کے مطابق وہ اپنے سوشل میڈیا اکاﺅنٹس سے جنسی کھلونوں، جنسی گڑیاﺅں اور دیگر اسی نوع کے برانڈز کی تشہیر کرتی ہے۔ انسٹاگرام پر اب تک ایلس کو 1لاکھ 4ہزار سے زائدلوگ فالو کر چکے ہیں اور یوٹیوب پر اس کے 28ہزار 800سے زائد سبسکرائبرز ہو چکے ہیں۔ ایلس کا کہنا ہے کہ ”میں پہلے اس اسی سٹگما کا شکار رہی جو میری انڈسٹری سے وابستہ ہے۔ باقی جسم فروش خواتین کی طرح میں بھی خوفزدہ تھی کہ میں سوشل میڈیا پر گئی تو لوگ میرے ساتھ کیا سلوک کریں گے۔ میں نے پہلے اپنے آپ کو اس خوف سے نکالااور اب میں ان سوشل پلیٹ فارمز پر بھی بہت مقبول ہو چکی ہوں اور ان سے فائدہ اٹھا رہی ہوں۔“

واضح رہے کہ ایلس لٹل امریکہ کی سب سے مہنگی لائسنس یافتہ جسم فروش خاتون ہے۔ وہ اس سے قبل ایک انٹرویو میں بتا چکی ہے کہ وہ ایک گاہک سے ایک وقت میں کم از کم 2ہزار ڈالر فیس لیتی ہے اور اس دھندے سے سالانہ 10لاکھ ڈالر سے زائد کما رہی ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس