پی ایس ایل6، پلینگ الیون میں 3 غیر ملکی کھلاڑیوں کی شمولیت ختم کرنے پر غور

پی ایس ایل6، پلینگ الیون میں 3 غیر ملکی کھلاڑیوں کی شمولیت ختم کرنے پر غور

  

 لاہور(سپورٹس رپورٹر) پی ایس ایل فرنچائزڈ کیلئے رواں سال دستیاب شدہ ونڈو میں ٹی ٹونٹی ایونٹ کرانے کی راہ میں سب سے بڑا مسئلہ غیرملکی کرکٹرزکی دستیابی ہوگا۔ تفصیلات کے مطابق کورونا کے بڑھتے ہوئے کیسز کی وجہ سے پی ایس ایل 6 کے باقی 20 میچز ملتوی ہونے پر تشویش میں مبتلا پی سی بی حکام کراچی میں سرجوڑ کر بیٹھے اور ایونٹ مکمل کرنے کیلئے رواں سال ممکنہ ونڈوز پر غور کیا، پی ایس ایل کے بقیہ میچز کے دوران سخت ترین ایس او پیز کیلئے کسی غیرملکی کمپنی کی خدمات حاصل کرنیکا فیصلہ بھی کیا گیا۔

ذرائع کے مطابق پی سی بی اجلاس میں زیر غور ا?نے والی تجاویز پر فرنچائزز نے بھی مشاورت کا آغاز کردیا ہے۔

تمام ٹیموں کے مالکان بائیو سیکیور ببل کو فول پروف بنانے کے تجویز کردہ پلان کو بہتر سمجھتے ہیں لیکن انہیں یہ فکر بھی ستا رہی ہے کہ اب غیر ملکی کرکٹرز کا اعتماد بحال کرنا ایک بڑا چیلنج ہوگا، ایونٹ کے لیے تجویز کردہ 10 روزہ قرنطینہ کی وجہ سے بھی کئی غیر ملکی کھلاڑی ایونٹ میں شرکت سے گریز کریں گے اور اگر پی ایس ایل کے بقیہ میچز مئی میں ہوئے تو ا?ئی پی ایل سے شیڈول متصادم ہونے کی وجہ سے بھی بہت سے غیرملکی کرکٹرز ملکی لیگ کے لیے دستیاب نہیں ہوں گے

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -