حکومت اسٹیبلشمنٹ کے سہارے پر کھڑی ہے: سراج الحق 

حکومت اسٹیبلشمنٹ کے سہارے پر کھڑی ہے: سراج الحق 

  

 تیمرگرہ (بیورورپورٹ)  امیر جماعت اسلامی پاکستان  سراج الحق نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان کا سینیٹ  الیکشن میں  پی ٹی ائی  کے بکے ہوئے ارکان اسمبلی سے اعتما د کا ووٹ لینا بڑا یو ٹرن ہے پی ٹی ائی کی حکومت اسٹبلشمنٹ کی سہارے پر کھڑی ہے جب بھی اسٹبلشمنٹ  نے پی ٹی ائی حکومت کی منہ سے اکسیجن ہٹا یا تو عمران خان کی حکومت ختم ہوجائیگی جما عت اسلامی نے چئیرمین سنیٹ  کے الیکشن میں ابھی تک کسی کی حما یت کا اعلان نہیں کیا ہے ان خیا لات کا اظہار انھوں نے تیمرگرہ حاجی آباد میں ملک امتیاز خان کے بیٹوں کی شادی کے موقع پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کیا اس موقع پر جماعت اسلامی کے صوبائی جنرل سیکرٹری عبدلواسع، امیر جماعت اسلامی لوئر دیر اعز ازلملک افکاری، سا بق ضلع ناظم حاجی محمد رسول خان اور جماعت اسلامی لوئر دیر کے سیکرٹری اطلا عات ریاض محمد ایڈوکیٹ بھی موجود تھے سراج الحق نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان نے خود اعتراف کیا کہ سنیٹ میں ان کے 16ارکان  فروخت ہوئے لیکن وزیر اعظم نے بکے ہوئے ارکان اسمبلی سے اعتما د کا ووٹ لیا  انہیں معا ف کر دیا جوکہ عوام کے انکھوں یں جھول ڈالنے کے مترادف ہے انھوں نے کہا کہ ایوان بالا  سرمایہ داروں اور جاگیر دارون کا کلب بن چکا ہے حکومت اور پی ڈی ایم نے سنیٹ میں سرمایہ داروں کو کروڑوں روپے کی عوض سنیٹ کاٹکٹ دئے او رارکا ن اسمبلی نے اپنی مفا دات اور بنک اکاو نٹس میں اضافہ کیا انھوں نے کہا وزیر اعظم اور ان کے وزراء کا الیکشن کو تنقید کا نشانہ بنا یا درست نہیں انھوں نے کہا کہ سنیٹ الیکشن میں پنجاب، سندھ، کے پی او ر بلوچستان کا نتائج حکومت نے تو قبول کرئے لیکن اسلام آباد کے نتائج اس لئے نہیں کررہے کہ وہ حکومتی نمائندہ حفیظ شیخ  کو شکست ہوئی انھوں نے کہا کہ حکومت اور پی ڈی ایم اپنی مفادات کا کھیل کھیل رہے ہیں انھوں نے کہا کہ جما عت اسلامی ہی ملک کو متبادل اور ایما ندار قیادت فراہم کرسکتی ہے انھوں نے کہا کہ حکومت کے دائیں بائیں ڈرگ، شوگر اور لینڈ مافیاز موجود ہیں انھوں نے کہا کہ پنجاب  میں سنیٹ الیکشن میں حکومت اور اپوزیشن نے ایک دوسرے کو سپیس دیا انھوں نے کہا کہ  عمران خان حکومت صابن کی ٹکی پر کھڑی ہے  جوکسی بھی وقت ڈھڑن تختہ ہوسکتی ہے۔ 

مزید :

صفحہ اول -