’مردہ‘ شخص کی بھارتی حکومت کو خود سوزی کی دھمکی

’مردہ‘ شخص کی بھارتی حکومت کو خود سوزی کی دھمکی
’مردہ‘ شخص کی بھارتی حکومت کو خود سوزی کی دھمکی

  

لکھنؤ (نیوز ڈیسک ) بھارت میں 48 سالہ زندہ شخص کو سرکاری دستاویزات میں مردہ قرار دے دیا گیا۔ متاثرہ شخص نے وزیراعلیٰ اترپردیش کی رہائش گاہ کے سامنے احتجاج کرتے ہوئے زندہ قرار نہ دینے پر خودسوزی کی دھمکی دیدی۔ پولیس کو درج کروائی گئی شکایت میں کمار نے الزام لگایا ہے کہ لینڈ مافیا نے اس کے خلاف سازش کی ہے۔ اس مافیا نے میرا جعلی ڈیتھ سرٹیفکیٹ عدالت میں پیش کرکے میری وراثتی زمین کسی اور شخص کے نام کروادی۔ کمار نے مزید الزام لگایا کہ اس سازش میں ان کی لالچی بیوی بھی شامل تھی۔ اس شکایت پر سول لائنز پولیس نے 15مئی 2013ءکو مقدمہ تو درج کر لیا لیکن اس کیس کی سماعت اور فیصلے میں جان بوجھ کر تاخیر کی جا رہی ہے۔ دوسری جانب میرٹھ کے میئر ہری کانت نے یہ اعتراف کیا ہے کہ شہری حکومت اس غلطی میں ملوث ہو سکتی ہے۔ لہذا انہوں نے اس معاملہ کی تحقیقات کے لئے میونسپل کمشنر کو خط لکھ دیا ہے۔ یاد رہے کہ ضلعی انتظامیہ کمار گوئل کو زندہ ماننے سے انکار کر چکی ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس