,مصر ٹی وی کی شام میں جاری جنگ کے بارے میں مضحکہ خیز دلیل

,مصر ٹی وی کی شام میں جاری جنگ کے بارے میں مضحکہ خیز دلیل

قاہرہ (بیورورپورٹ) مشرقِ وسطیٰ کے ممالک پچھلے کچھ مرحلہ سے عرب سپرنگ (بہار عرب) نامی طوفان کی زد میں ہیں۔ یہ سیاسی طوفان تیونس، لیبیا اور مصر میں حکومتیں گرانے کے بعد اب شام میں آگ لگائے ہوئے ہے۔ مشرقِ وسطیٰ میں تبدیلی کی ان تحریکوں کو عوام اور تجزیہ کاروں کی ایک بڑی تعداد امریکی سازش سمجھتی ہے۔ مصر کے ایک ایک ٹی وی چینل نے اب پھر یہ دعویٰ کیا ہے کہ شام میں حکومت کے خلاف باغیوں کی جنگ دراصل امریکہ کی سازش ہے اور اس کے ثبوت کے طور پر اس چینل نے ایک انوکھا ثبوت پیش کیا ہے اور یہ ثبوت ہے امریکی مزاحیہ کارٹون ”سمپسنز“ کی ایک قسط جو کہ 2001ءمیں نشر کی گئی۔ ٹی وی پر دکھائی جانے والی تصویروں میں ایک خاص تصویر کی طرف اشارہ کرتے ہوئے بتایا گیا ہے کہ اس میں ایک جیپ پر شامی باغیوں کے جھنڈے کی تصویر دیکھی جاسکتی ہے۔ ٹی وی کا اینکر کا کہنا ہے کہ 2001ءمیں، جبکہ عرب سپرنگ کا کہیں نام و نشان بھی نہیں تھا، موجودہ شامی باغیوں کے جھنڈے کا امریکی کارٹونوںمیں نظر آنا اس بات کا ثبوت ہے کہ شام میں جاری خانہ جنگی کا منصوبہ کئی سال پہلے امریکہ میں بنایا گیا اور یہ عالمی امریکی سازش کا حصہ ہے۔ یہ امریکی کارٹون اس سے پہلے ترکی میں بھی ہدفِ تنقید بن چکے ہیں۔

مزید : صفحہ آخر