صوبائی کابینہ نے جنوبی پنجاب کے تین ڈویژنوں میں ملازمتوں کوٹہ بحال کرنے کی منظوری دیدی

صوبائی کابینہ نے جنوبی پنجاب کے تین ڈویژنوں میں ملازمتوں کوٹہ بحال کرنے کی ...

  

لاہورمانگا منڈی(جنرل رپورٹر،نمائندہ خصوصی) وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف کی زیرصدارت صوبائی کابینہ کا اجلاس منعقد ہوا،جس میں وفاقی وزیر داخلہ احسن اقبال پر فائرنگ کے واقعہ کی شدید مذمت کی گئی اوروفاقی وزیرداخلہ احسن اقبال کی جلد صحت یابی کیلئے دعا بھی کی گئی۔ایڈیشنل آئی جی محکمہ انسداد دہشت گردی کی سربراہی میں مشترکہ تحقیقاتی ٹیم تشکیل دینے کی ہدایت کرتے ہوئے وزیراعلیٰ نے کہا کہ یہ کمیٹی واقعہ کی مکمل تحقیقات کرے گی پنجاب کابینہ نے جنوبی پنجاب کے تین ڈویژنوں میں ملازمتوں کاکوٹہ بحال کرنے کی منظوری دی ،جس کے تحت بہاولپور ،ملتان اورڈیرہ غازی خان ڈویژنوں کیساتھ بھکر اورمیانوالی کے اضلاع کاسرکاری ملازمتوں میں 20فیصد کوٹہ ہوگا۔ اجلاس میں پنجاب کول مائننگ کمپنی کا نام تبدیل کر کے پنجاب منرل کمپنی رکھنے کی منظوری دی گئی۔ وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہبازشریف نے صوبائی کابینہ کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ جنوبی پنجاب کے عوام کی فلاح اورترقی مجھے بے حد عزیز ہے اوراس خطے کی ترقی کیلئے پاکستان مسلم لیگ(ن) کی حکومت نے بے مثال اقدامات کیے ہیں ۔ 31فیصد آبادی کے مقابلے میں 36فیصد وسائل کی فراہمی اسی سلسلے کی کڑی ہے ۔انہوں نے کہا کہ پورے خطے میں اربوں روپے کی لاگت سے مکمل ہونے والے منصوبوں سے عوام مستفید ہورہے ہیں اورجنوبی پنجاب کی ترقی کیلئے آئندہ بھی اقدامات کا سلسلہ جاری رہے گا۔صوبائی وزراء،مشیران ،معاونین خصوصی ،چیف سیکرٹری ،انسپکٹر جنرل پولیس نے اجلاس میں شرکت کی۔مانگا منڈی سے پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خاں کی ایک بہت اہم اور بڑی وکٹ گر گئی جس سے اس حلقہ این اے 136سے تحریک انصاف کے متوقع امیدوار کا صفایا ہو جائے گا۔ حلقہ این اے136سے سردار خاندان نے تحریک انصاف چھوڑ کر میاں شہباز شریف کی قیادت میں مسلم لیگ ن میں شمولیت کا اعلان کر دیا ہے۔سردار خاندان کے بڑے بھائی سردار عادل عمر کے ساتھ بھائیوں سردار کامل عمر سابق ایم این اے سردار عاقل عمر سابقہ یوسی ناظم نے وزیر اعلیٰ پنجاب میاں محمد شہباز شریف کی رہائش گاہ ماڈل ٹاون میں جاکر شمولیت کا اعلان کیا۔ این اے 136میں جشن کا سماء شروع ہو گیا مانگامنڈی ،سندر،مراکہ،چوہنگ،رائیونڈ اور مختلف دیہادت اور قصبوں میں کئی مقامات پر بھنگڑا ڈالا گیا اور مٹھائی تقسیم کرکے خوشی کا اظہار کیا گیا۔مسلم لیگ ن کے کارکنوں نے کہا کہ صبح کا بُھولا ہوا شام کو گھر آجائے تو اسے بُھولا مت کہو ، سردار خاندان تقریباً عرصہ 70سال سے سیاست میں حصہ لے رہا ہے ان کے دادا سردار حبیب اللہ بھی سیاست میں حصہ لیکر بورڈ کے ممبر منتخب ہوئے اس کے بعد ان کے والد سردار خالد عمرساری زندگی سیاست میں حصہ لیتے رہے اور ضلع کونسل لاہور کے چیئرمین کے علاوہ مارکیٹ کمیٹی کے چیئرمین رہے باپ کے بعد تینوں بھائیوں نے بھی سیاست میں مضبوط قدم جمائے سردار کامل عمر پہلے مسلم لیگ ن سے الیکشن میں حصہ لیکر قومی اسمبلی کے رکن منتخب ہو گئے ا سکے بعد مسلم لیگ ق میں شامل ہوکر علامہ اقبال ٹاون کے چیئرمین منتخب ہو گئے سردار کامل عمر کے بڑے بھائی سردار عادل عمر مسلم لیگ ن میں ہی رہے اور پرانا حلقہ این اے129سے مسلم لیگ ن کے پلیٹ فارم سے الیکشن میں حصہ لیا۔ سردار کامل عمر اور سردار عاقل عمر نے مسلم لیگ ق کے پلیٹ فارم پر 2008میں اسی حلقہ این اے128سے ایم این اے کا الیکشن لڑا مگر کامیاب نہ ہو سکے مسلم لیگ ن کے امیدوار کامیاب ہو گئے اس کے بعد دونوں بھائی ق لیگ چھوڑ کر تحریک انصاف میں شامل ہو گئے مگر چند سال ہی تحریک انصاف کے ساتھ چل کر پریشان ہو گئے۔ دوبارہ مسلم لیگ ن میں شمولیت کا اعلان کرتے ہوئے سردار کامل عمر اور سردار عاقل عمر نے کہا کہ پاکستان کی بہتری کیلئے میاں نوازشریف اور میاں شہباز شریف کر سکتے ہیں اور کوئی سیاسی پارٹی نہیں کر سکتی، ہم پاکستان کی بہتری کیلئے مسلم لیگ ن میں شامل ہوگئے ہیں اب ہمارا جینا مرنا مسلم لیگ ن کے ساتھ ہو گا انہوں نے مشترکہ بیان میں کہا کہ مخالفین مسلم لیگ ن کی مقبولیت سے خوف زدہ ہیں 20کروڑ با شعور عوام ترقی کا راستہ روکنے والوں کو الیکشن 2018میں عبرت ناک سزا دیں گے میاں شہبازشریف نے تینوں بھائیوں سے کہا کہ اپنے نئے حلقہ این اے 136میں ورک کرے اور ناراض کارکنوں سے رابطہ کرکے ان کو مسلم لیگ ن میں ملائیں انشاء اللہ 2018کے عام انتخابات میں مسلم لیگ ن بھاری اکثریت سے کامیاب ہو گی۔

شہباز شریف

لاہور(جنرل رپورٹر) وزیراعلیٰ پنجاب محمد شہباز شریف نے مقبوضہ کشمیر میں نہتے کشمیریوں پر بھارتی بربریت میں اضافے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ گزشتہ 36گھنٹوں میں 14کشمیریوں کی شہادت پر عالمی برادری کا گہری نیند سویا ضمیراگر اب نہ جاگا تو پھر کب جاگے گا؟۔ بھارتی فورسز نے صرف شوپیاں کے علاقے میں 10نوجوانوں کو شہید کیاہے۔وزیراعلی نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ بھارتی ا فواج کے ظلم وستم کے باعث مقبوضہ کشمیر ایک جیتی جاگتی دوزخ بن چکا ہے جہاں روزانہ کی بنیاد پر بھارتی فوج کی کارروائیاں انسانیت کے ماتھے پر بدنما دھبہ بن چکی ہیں اور بھارتی بربریت پر پورا کشمیر سراپا احتجاج ہے۔ اس میں کوئی شک نہیں کہ کشمیری نوجوان اقوام متحدہ کی قرار دادوں کے مطابق حق خودارادیت کے حصول کیلئے پرعزم ہیں۔ وزیراعلیٰ نے سوال کیا کہ کیا بھارت گولیوں اور پیلٹ گنز کے ذریعے کشمیریوں کے خواب لُوٹ سکتا ہے؟۔ کیا وہ ایسی قوم کو زیادہ دیر غلام بنا کے رکھ سکتا ہے جو اپنے بنیادی حقوق کے حصول کیلئے ہر قربانی دینے کا تہیہ کرچکی ہے؟۔ عالمی برادری آخر کب تک کشمیر کو جلتا ہوا دیکھ سکتی ہے؟۔ منصفانہ کاز کیلئے جدوجہد کو دنیا کا قانون بھی اخلاقی اور قانونی حمایت فراہم کرتا ہے۔ محمد شہباز شریف نے کہا میرا یہ ایمان ہے کہ کشمیریوں کی حق خودارادیت کیلئے جاری جدوجہد آنیوالی نسلوں کیلئے ایک استعارہ بنے گی اور تاریخ کی کتابوں میں ایک لیجنڈ کے طور پر پڑھائی جائے گی۔

وزیراعلیٰ

مزید :

صفحہ اول -