دیرینہ دشمنی پر باپ بیٹا قتل، بیٹے کے بدلے میں قاتل کا والد مار ڈالا

دیرینہ دشمنی پر باپ بیٹا قتل، بیٹے کے بدلے میں قاتل کا والد مار ڈالا

  

ملتان،شجاع آباد، عبدالحکیم،کبیروالا،بٹہ کوٹ ، حویلی کورنگا،بارہ میل،دو کوٹہ،لڈن،جام پور ، ڈہرکی (وقائع نگار،نمائندگان)دیرینہ دشمنی پر باپ بیٹے کو موت کے گھاٹ اتار دیا گیا بیٹے کے بدلے میں قاتل کے باپ کو مارڈالا 2بچوں سمیت 7افراد(بقیہ نمبر37صفحہ12پر )

حادثات میں دم توڑ گئے تفصیل کے مطابق ملتان سے وقائع نگا رکے مطابق تھانہ ممتاز آباد کے علاقے میں تیز رفتار ٹرک نے موٹرسائیکل سوار ماں بیٹے کو کچل ڈالا والدہ زخموں کی تاب نہ لا کر دم توڑ گئی جبکہ بیٹا شدید زخمی ہو گیا ،محمد فیصل نے پولیس کو آگاہ کیا کہ اس کا بھائی اعجاز احمد اپنی والدہ ظہوراں مائی کے ساتھ موٹرسائیکل پر جا رہا تھا کہ تیز رفتاڑ ٹرک نے کچل ڈالا اس کی والدہ موقع پر ہی جان نبحق ہو گء جبکہ اس کا بھائی شدید زخمی ہو گیا ٹرک ڈرائیور موقع سے فرار ہو گیا پولیس نے مقدمہ درج کر کے ڈرائیور کی تلاش شروع کر دی ہے،بستی لنگڑیال میں ٹریکٹر ٹرالی کی زد میں آ کر 8 سالہ بچہ جاں بحق ہو گیا، تھانہ قطب پور کے علاقے میں ٹریکٹر ٹرالی نمبر کے بی / 2015 کی زد میں 8 سالہ فیضان آ یا اور موقع پر ہی جاں بحق ہو گیا، ٹریکٹر ٹرالی شہباز نامی ڈرائیور چلا رہا تھا، تھانہ نیو ملتان کے علاقے میں واقع کمھاراں والا چوک پرنامعلوم ڈرائیور نے ایف ایس سی کے طالب علم کو کچل ڈالا جو کہ زخموں کی تاب نہ لاکر دم توڑ گیا ،محمد یونس نے پولیس کو آگاہ کیا کہ اس کا بھتیجا اسد روڈ پر پیدل جا رہا تھا کہ تیز رفتار کار نے پیچھے سے ٹکر ماری جس سے وہ شدید زخمی ہو گیا جس کو زخمی حالت میں نشتر منتقل کیا جا رہا تھا کہ وہ دم توڑ گیا پولیس نے کا مہران نمبر ایم این 4363 کے ڈرائیور کے خلاف مقدم،ہ درج کر کے کار کی تلاش شروع کر دی ہے۔تھانہ جلیل آباد کے علاقے عزیز ہوٹل چوک کے قریب سے بھی نامعلوم شخص کی نعش برآمد ہوئی ہے40سالہ شخص بظاہر نشے کا عادی محسوس ہورہا تھا،دونوں تھانوں کی پولیس نے دونوں نعشوں کو پوسٹ مارٹم کیلئے نشتر سرد خانے میں منتقل کردیا ہے۔شجاع آباد سے نمائندہ خصوصی کے مطابق دیرینہ قتل کی دشمنی پر شجاع آباد کے نواحی علاقہ کیسر پور میں باپ بیٹا قتل ،قتل ہونے والوں میں اللہ بخش لنگاہ باپ اور امین بیٹا شامل ہیں کچھ عرصہ قبل مقتولین وغیرہ نے صابر نون کو تشدد کرکے ہلاک کردیا تھا تھانہ صدر پولیس نے 2نامزد عابد اور اختر اور 2نامعلوم افراد کے خلاف مقدمہ درج کرلیا ہے اور لاشوں کا پوسٹمارٹم کرانے کے بعد لاشیں ورثا کے حوالے کردی گئی ہیں علاوہ ازیں موضع کسوڑی میں قتل شدہ نوجوان کی لاش ملی ہے جس کی تاحال شناخت نہ ہوسکی ہے اور نہ ہی ملزم کا پتہ چل سکا ہے۔عبدالحکیم ،کبیر والا بٹہ کوٹ،حویلی کورنگا،بارہ میل سے سپیشل رپورٹر،نمائندہ خصوصی،نامہ نگار،نمائندہ پاکستان،سٹی رپورٹر کے مطابق دو سال قبل کھو ہ تھراجاں والے کے رہائشی اسحاق ولد نورنگ نے اختر ولد اعظم کو قتل کر دیا تھا اور سعودی عرب فرار ہونے میں کامیاب ہو گیا اسحاق اختر کے قتل کے کیس میں اشتہاری ہے ۔مقتول اختر کے والد اعظم ہراج نے اپنے بیے کے قتل کا بدلہ لینے کے لئے اسحاق کے والد نورنگ کو اپنے ایک ساتھی کے ساتھ فائرنگ کر کے اس وقت قتل کر دیا جب وہ کبیروالہ سے اختر کے قتل کی پیشی بگھت کر واپس عبدالحکیم آرہاتھا ، کہ تھانہ عبدالحکیم کی حدود میں بستی حسین اباد اول اور جھلار کے درمیان اعظم اور دیگر نے فائرنگ کر کے اس کو قتل کر دیا پولیس عبدالحکیم نے نعش کو قبضہ میں لے کر پوسٹ مارٹم کے لئے کبیروالہ بھیج دیا ہے جبکہ قاتل کی تلاش کے لئے پولیس ٹیمیں کوشش کر رہی ہیں۔تاحال قاتل گرفتار نہی ہو سکا ۔دریں اثناء عبدالحکیم کے نواحی موضع شہادت کندلہ کا رہائشی مزدور غلام مصطفی ولد پہلوان قوم بھٹی جو زیر تعمیر موٹر وے شورکوٹ خانیوال پر مزدوری کر رہاتھا کہ گریڈر کے نیچے آکر کچلا گیا اور شدید زخمی ہو نے کے بعد موقع پر ہی جاں بحق ہو گیا ۔دوکوٹہ سے نامہ نگار،نمائندہ پاکستان کے مطابق نواحی چک نمبر 205/Wbبستی باغ حسین کے رہائشی اعجاز حسین جٹ جو کہ دوکوٹہ میں پنکچر لگا نے کا کام کرتے ہیں نہر کنارے رہائش ہونے کی وجہ سے ان کی بیوی جانوروں کو پانی پلانے کیلئے نہر پر گئی تو ساتھ ہی اس کا بیٹا اڑھائی سالہ زین عباس بھی سائیکلی پر نکل کھڑا ہوا جو کہ ماں کو نظر نہ آیا وہ اچانک نہر میں گر کر جاں بحق ہو گیا اور گھر سے دور اس کی تیرتی ہوئی نعش ملی ۔لڈن سے نامہ نگار کے مطابق لڈن کے نوا حی علاقہ موضع چھجو دیہہ کا رہائشی صابر علی الصبح کھیتوں میں ٹریکٹر پر کام کر رہا تھا کہ نیند آنے سے اچانک ٹریکٹر سے نیچے گر گیا جس کی وجہ سے وہ جاں بحق ہو گیا۔جام پور سے نامہ نگار کے مطابق تھانہ ہڑند کی حدود میں ایک سال قبل عقیل احمد نے نصر اللہ قوم حجانہ کو پرانی دشمنی پر فائرکیا جو خطا ہو گیا تھا۔ مورخہ اکیس اپریل کو عقیل احمد اپنے ڈیرہ پر سویا ہوا تھا۔ ملزم نصر اللہ نے اپنے دوستوں کے ہمراہ پستول سے فائرنگ کرکے عقیل احمد کو زخمی کر دیا۔ شدیدزخمی کی وجہ سے مضروب عقیل احمد تین بجے دم توڑ گیا ۔ پولیس نے لاش پوسٹ مارٹم کے بعد ورثاء کے حوالہ کر دی۔ ڈہرکی سے نامہ نگار کے مطابق ڈہرکی کے قریب اپنے گاؤں رئیس منظورچاچڑ کے رہائشی عورت اورنوجوان اپنے گاؤں کی طرف جارہے تھے تو موٹرسائیکل سلپ ہونے کے باعث سی پیک موٹر وی پر کام کرنے والے چائنہ کمپنی کے ایک ڈمپر کے ٹائروں تلے آکر45سالہ عورت حمیداں چاچڑکچل کر موقع پرہی جاں بحق ہوگئی جبکہ موٹرسائیکل چالانیو الا نوجوان معجزانے طورپربچ گیا پولیس اورایمبو لینس جائے حادثہ پر نہ پہنچنے کی وجہ سے جاں بحق ہونے والی عورت کی لاش دوگھنٹے تک روڈ پر پڑی رہی عورت کے ورثا جائے حادثہ پرپہنچ کر اپنی مدد آپ کے تحت لاش اٹھا کر سول ہسپتال اوباڑوپہنچایا پولیس ہسپتال پہنچ کر پوسٹ مارٹم کرانے کے بعد نعش ورثا کے حوالے کردی ہے۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -