جیالوں نے کھلاڑیوں کا کیمپ اکھاڑ دیا، پتھراؤ سے 6زخمی

جیالوں نے کھلاڑیوں کا کیمپ اکھاڑ دیا، پتھراؤ سے 6زخمی

  

کراچی (سٹاف رپورٹر)پاکستا ن پیپلزپارٹی اور پاکستان تحریک انصاف نے شہر قائد کا امن داؤ پر لگادیا۔ایک ہی دن ایک ہی مقام پر جلسہ کرنے پر بضد دونوں جماعتوں کے کارکن حکیم سعید گراؤنڈ گلشن اقبال میں آمنے سامنے آگئے اور ایک دوسرے پر پتھراؤ کیا جس کے نتیجے میں 6افراد زخمی ہوگئے ۔مشتعل کارکنوں نے ایک دوسرے کے کیمپ اکھاڑ دیئے اور گراؤنڈ کے باہر کھڑی موٹرسائیکلیں توڑ دیں ۔پولیس نے کارکنوں کو منتشر کرنے کے لیے ہوائی فائرنگ کی جس سے علاقے میں خوف و ہراس پھیل گیا ۔دونوں جماعتوں میں کشیدگی کے باعث اہل علاقہ محصور ہوکر رہ گئے ، علاقے میں ٹریفک معطل اور دکانیں بند ہوگئیں ۔تفصیلات کے مطابق گلشن اقبال میں واقع حکیم سعید گراؤنڈ میں 12مئی کو جلسے کے لیے پیپلزپارٹی اور تحریک انصاف آمنے سامنے آگئے ہیں ۔دونوں جماعتوں پہلے جلسہ کرنے کے اعلان کا دعویٰ کرتے ہوئے گراؤنڈ میں کیمپ قائم کردیئے ۔پیر اور منگل کی درمیانی شب صورت حال اس وقت کشیدہ ہوگئی جب مبینہ طور پر پیپلزپارٹی کے کارکنوں نے گراؤنڈ میں قائم تحریک انصاف کے کیمپ کو اکھاڑدیا جس کے بعد دونوں جماعتوں کے کارکن مشتعل ایک دوسرے پر پتھراؤ شروع کردیا اور گراؤنڈ کے باہر کھڑی موٹرسائیکلیں توڑ دیں ۔کارکنوں میں تصادم کے باعث دن بھر سے تماشہ دیکھنے والی پولیس پہلے تو علاقے سے غائب ہوگئی اور پھر صورت حال بگڑتے ہوئے دیکھ کر مزید نفری بلائی گئی جس نے ہوائی فائرنگ کرکے مشتعل افراد کو منتشر کرنے کی کوشش کی ۔دونوں جماعتوں کے مشتعل کارکنوں نے نجی ٹی وی کی ڈی ایس این جی وین کو پتھراؤ کرکے شدیدنقصان پہنچایا ۔پتھراؤ کے باعث گراؤنڈ میں موجود 6افراد زخمی ہوگئے ۔دونوں جماعتوں میں تصادم کے بعد علاقے میں خوف و ہراس پھیل گیا اور ٹریفک کی آمد و رفت معطل ہوگئی اور رات گئے کھلی رہنے والی دکانیں بھی بند ہوگئیں ۔پولیس کی جانب سے کی جانے والی ہوائی فائرنگ کے باعث اہل علاقہ گھرو ں میں محصور ہوکر رہ گئے ۔ادھر پاکستان تحریک انصاف نے حکیم سعید گراؤنڈ پر اپنا کیمپ اکھاڑے جانے اور کارکنوں پر تشدد کے خلاف بلاول ہاؤس پر دھرنا دینے کا اعلان کردیا ہے ۔پی ٹی آئی رہنما علی زیدی نے کہا کہ پیپلزپارٹی کے کارکنوں نے ہمارے کیمپ پر حملہ کیا اور کارکنوں کو تشدد کا نشانہ بنایا گیا ۔پیپلزپارٹی میں جرات ہے تو وہ اب یہاں پر جلسہ کرکے دکھائے ۔دوسری جانب پیپلزپارٹی کے رہنما سعید غنی نے کہا کہ ہم نے3 مئی کو ہی ڈپٹی کمشنر سے سیاسی سرگرمی ہونے نہ ہونے کا معلوم کر چکے تھے ۔پی ٹی آئی کے کارکن علاقے میں خوف و ہراس پھیلا رہے ہیں ۔

مزید :

کراچی صفحہ اول -