کٹاس راج مندر کیس،سیمنٹ فیکٹریوں کو 2ارب روپے سیکیورٹی ،متبادل پانی کے انتظام کرنے کا حکم

کٹاس راج مندر کیس،سیمنٹ فیکٹریوں کو 2ارب روپے سیکیورٹی ،متبادل پانی کے ...
کٹاس راج مندر کیس،سیمنٹ فیکٹریوں کو 2ارب روپے سیکیورٹی ،متبادل پانی کے انتظام کرنے کا حکم

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے کٹاس راج مندر کیس نمٹاتے ہوئے سیمنٹ فیکٹریوں کو 2 ارب روپے سیکیورٹی اور متبادل پانی کے انتظام کا حکم دے دیا۔

سپریم کور ٹ آف پاکستان میں کٹاس راج مندر ازخود نوٹس کیس کی سماعت چیف جسٹس میاں ثاقب نثار کی سربراہی میں کی گئی ۔چیف جسٹس نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ سیمنٹ فیکٹریوں کی وجہ سے کٹاس راج مندر کا تالاب اور وہاں چشمے بند ہو گئے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ پاکستان میں مسلمانوں کی اکثریت ہے ،ہمارے نبی نے اقلیتوں کا سب سے زیادہ خیال رکھا ہے جتنا کسی نے بھی نہیں رکھا۔

چیف جسٹس نے کہا کہ سیمنٹ کی فیکٹریوں کو دھواں کے اخراج کا بہترین سسٹم لگانا پڑے گا۔سیمنٹ فیکٹریوں کو عالمی معیار کو مد نظر رکھنا ہو گا ۔انہوں نے کہا کہ ضرورت پڑی تو دھواں کے اخراج کے سسٹم کو چیک کرائیں گے ۔سیمنٹ فیکٹریوں سے علاقہ میں آلودگی نہیں ہونی چاہیے ۔

چیف جسٹس نے استفسار کیا کہ کٹاس راج مندر کے تا لاب کا کیا ہو گا ؟انہوں نے کہا کہ سیمنٹ فیکٹریاں مل کر مندر کی بہتری اور تالاب کو بھرنے کا کام کریں ۔چیف جسٹس نے کیس نمٹاتے ہوئے حکم دیا کہ سیمنٹ فیکٹریاں مل کر 2ارب روپے کی سیکیورٹی جمع کرائیں اور 6 ماہ کے اندر متبادل پانی کا انتظام کریں۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -