بدقسمت خاتون کی لاش نہر سے برآمد، کتوں نے مختلف حصے نوچ ڈالے، پولیس نے خاموشی توڑی نہ کارروائی کی

بدقسمت خاتون کی لاش نہر سے برآمد، کتوں نے مختلف حصے نوچ ڈالے، پولیس نے ...
 بدقسمت خاتون کی لاش نہر سے برآمد، کتوں نے مختلف حصے نوچ ڈالے، پولیس نے خاموشی توڑی نہ کارروائی کی

  

شیخوپورہ (ویب ڈیسک) تھانہ نارنگ منڈی پولیس کی بدترین بے حسی نے عوام کو رلادیا، سات روز قبل بی آر بی نہر سے ملنے والی خاتون کی نعش کو کتے، گیدڑ اور چیلیں کھاتی رہیں اور عوام کی بار بار اطلاعات کے باوجود پولیس نے سات روز تک نعش قبضہ میں نہ لی، بالآخر ہڈیاں، کھوپڑیاں، بال اور دانت باقی رہ گئے، مقتولہ کون ہے اسے کیوں بے دردی سے قتل کیا گیا اور نعش بی آر بی نہر کے پانی میں تیرتی ہوئی کیسے یہاں تک پہنچی کچھ معلوم نہیں ہوسکا۔

یوٹیوب چینل سبسکرائب کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

روزنامہ خبریں کے مطابق یونین کونسل گھڑیال کلاں کے علاقہ بول چک کے عوام نے میڈیا کو اطلاع دی کہ گاﺅں کے باہر بی آر بی نہر کنارے سات آٹھ روز سے نامعلوم نعش پڑی ہے۔ پولیس اطلاع کے باوجود توجہ نہیں دے رہی۔ عوام نے میڈیا نے عوام کو بتایا کہ گاﺅں کے ایک چرواہے نے بی آر بی نہر میں بوری بند نعش دیکھی اور سے نہر سے نکال کر کنارے پر لے آیا۔

بوری جب کھولی گئی تو نعش کے چھوٹے چھوٹے ٹکڑے ملے، فوری طور پر اہل دیہہ نے نارنگ منڈی پولیس اور چوکی مہتہ سوجاپولیس کو صورتحال سے آگاہ کیا، چھ روز تک کتے آدھی سے زیادہ نعش نوچ چکے تھے اور روز خاتون کا سر دانت اور سر کے بال کنارے پڑے رہے اور باقی تمام دھڑ کتے کھاگئے، نعش کے قریب سے شدید تعفن اور بدبو اُٹھ رہی تھی۔

عوامی شہری حلقوں نے وزیراعلیٰ پنجاب، آئی جی اور ڈی پی او شیخوپورہ سے سخت نوٹس لینے اور ذمہ داران کے خلاف سخت کارروائی کا مطالبہ کیا ہے۔

مزید :

جرم و انصاف -علاقائی -پنجاب -شیخوپورہ -