نریندرا مودی جہاں جاتے جھوٹ بولتے ہیں ،اچھی تقریر تو اداکار بھی کر لیتے ہیں لیکن تقریروں سے غریبوں کا پیٹ نہیں بھرتا :سونیا گاندھی 

نریندرا مودی جہاں جاتے جھوٹ بولتے ہیں ،اچھی تقریر تو اداکار بھی کر لیتے ہیں ...
نریندرا مودی جہاں جاتے جھوٹ بولتے ہیں ،اچھی تقریر تو اداکار بھی کر لیتے ہیں لیکن تقریروں سے غریبوں کا پیٹ نہیں بھرتا :سونیا گاندھی 

  

میسور(ڈیلی پاکستان آن لائن )ہندوستان کی سب سے بڑی اپوزیشن جماعت کانگریس کی چیئرپرسن سونا گاندھی نے بھارتی وزیر اعظم نریندرا مودی پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ مودی جی جہاں جاتے ہیں جھوٹ بولتے ہیں ،وہ تاریخ کے ساتھ چھیڑ چھاڑ کرتے اور اپنا سیاسی مقصد حاصل کرنے کے لئے تاریخی ہستیوں کا غلط استعمال کرتے ہیں،مودی جی اچھی تقریر تو کرتے ہیں لیکن اچھی تقریروں سے لوگوں کا پیٹ نہیں بھرتا ۔

بھارتی نجی ٹی وی کے مطابق جے پور میں بڑے انتخابی جلسے سے خطاب کرتے ہوئے سونیا گاندھی کا کہنا تھا کہ کرناٹک میں قحط سالی ہوئی تو وزیراعلیٰ سدارمیا نے مودی سے ملنے کا وقت مانگا لیکن انہیں وقت نہیں دیا گیا، مودی سرکار کرناٹک میں ہماری سرکار کے ساتھ بھید بھاو کررہی ہے،کیا یہی آپ کا ’’سب کا ساتھ ، سب کا وکاس‘‘ہندوستانی وزیر اعظم مودی جی اچھی تقریر کرتے ہیں، ایک اداکار کی طرح تقریر کرتے ہیں، لیکن صرف تقریرسے لوگوں کا پیٹ نہیں بھر سکتا اور لوگوں کا فلاح وبہبود نہیں ہوسکتا۔ سونیا گاندھی نے کہاکہ مودی جہاں جاتے ہیں، جھوٹ ہی بولتے ہیں،وہ اپنے سامنے کسی کو برداشت نہیں کر سکتے ۔سونیا گاندھی نے سوال کیا کہ بدعنوانی ہٹانے کے وزیراعظم مودی کے وعدے کا کیا ہوا؟ چار سال تک لوک پال کی تقرری کیوں نہیں ہوئی؟۔

مزید :

بین الاقوامی -