لاہور ویسٹ مینجمنٹ کے جی ایم طاہر مقبول کا جسمانی ریمانڈ ، نیب کے حوالے

    لاہور ویسٹ مینجمنٹ کے جی ایم طاہر مقبول کا جسمانی ریمانڈ ، نیب کے حوالے

لاہور(آئی اےن پی)احتساب عدالت نے لاہور ویسٹ مینجمنٹ کمپنی کیس میں غیرقانونی ایویلیوایشن اور ٹھیکیداروں کو مبینہ طور پر کروڑوں روپے کے غیرقانونی فوائد پہنچانے کے الزام میں گرفتار جنرل منیجر محمد طاہر مقبول کو 14روزہ جسمانی ریمانڈ پر نیب کے حوالے کر دیا ۔احتساب عدالت کے جج جواد الحسن نے کیس کی سماعت کی ۔ نیب لاہور کی جانب سے ملزم محمد طاہر مقبول کو عدالت پیش کیا گیا ۔ نیب پراسیکیوٹر کے مطابق محمد طاہر مقبول ایل ڈبلیو ایم سی میں بطور جی ایم پروکیورمنٹ و کنٹریکٹ تعینات تھے ، نیب لاہور ایل ڈبلیو ایم سی کے منصوبوں میں تخمینہ جات کی مد میں مبینہ طور پرکروڑوں روپے کے ہیر پھیر کی تحقیقات کررہاہے،ملزم کیخلاف اب تک کی تحقیقات میں لگ بھگ 1 ارب روپے کے مبینہ غبن کے شواہد منظر عام پر آچکے ہیں۔ نیب لاہور کے مطابق ملزم نے بورڈ آف ڈائریکٹرز کی منظوری کے بغیر غیر قانونی طور پر من پسند کمپنی میسرز البیراک کو ٹھیکوں کی بڈنگ جاری کی، نیب لاہور کی جانب سے مزکورہ کیس میں چند روز قبل تین ملزمان کو گرفتار کیا ۔ملزم طاہر مقبول کو 21 مئی کو دوبارہ پیش کرنے کا حکم دیا ہے۔

نیب کے حوالے

مزید : صفحہ آخر