وزیراعظم نے شبرزیدی کی بطور چیئر مین ایف بی آر تقرری پر بیورو کریسی کے مخالفت کرنے پرایسی بات کہی کہ پاکستانی قوم خوش ہوجائیگی

وزیراعظم نے شبرزیدی کی بطور چیئر مین ایف بی آر تقرری پر بیورو کریسی کے مخالفت ...
وزیراعظم نے شبرزیدی کی بطور چیئر مین ایف بی آر تقرری پر بیورو کریسی کے مخالفت کرنے پرایسی بات کہی کہ پاکستانی قوم خوش ہوجائیگی

  

اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) وفاقی وزیر قانون ڈاکٹرفروغ نسیم نے کہاہے کہ جب وزیر اعظم عمران خان کوبتایا گیا کہ شبر زیدی کی بطور چیئر مین ایف بی آر تقرر ی پر بیورو کریسی کی جانب سے مزاحمت کی جارہی ہے تو وزیر اعظم نے کہا کہ اس کا مطلب یہ ہے کہ یہ بندہ بالکل ٹھیک اور میرٹ پر ہے ۔

دنیا نیوز کے پروگرام ”دنیا کامران خان کے ساتھ“میں گفتگو کرتے ہوئے وفاقی وزیر قانون نے کہا کہ چیئر مین ایف بی آر شبر زیدی کووزیراعظم اور کابینہ کی سلیکشن کمیٹی نے نامزد کیاہے ، شبر زیدی راضی نہیں تھے ، ہم نے ان کواس عہدے کیلئے منایا ،شبر زیدی کی تقرری کے مخالفین میرٹ کے مخالف ہیں۔ انہوں نے کہا کہ شبرزیدی اپنی فرم سے الگ ہوکر ملک کیلئے کام کریں گے ، اپنا نقصان کریں گے اور ملک کافائدہ کریں گے ، وہ کوئی تنخواہ نہیں لیں گے بلکہ اعزازی طور پر کام کریں گے ۔

ان کا کہنا تھا کہ شبر زیدی کی تقرری کے پیچھے صرف حکومت نہیں بلکہ پورا پاکستان کھڑا ہے ، ان کی تقرری قواعدو ضوابط کے مطابق کی گئی ہے ، شبر زیدی کی مہربانی ہے کہ ان کی جانب سے یہ عہدہ قبول کیا گیاہے ۔ انہوں نے کہا کہ مخصوص حالات میں قواعد کو معطل کرکے تقرری کا قانون موجود ہے ، عمران خان کوجب بتایا گیا کہ شبر زیدی کی چیئر مین ایف بی آر تقرری کے حوالے سے بیورو کریسی میں مزاحمت پائی جارہی ہے توعمران خان نے کہا کہ اس کامطلب یہ ہے کہ یہ آدمی بالکل ٹھیک ہے اورمیرٹ پر ہے۔وزیر قانون نے کہا کہ سب سے بہترآدمی کو چیئر مین ایف بی آر لگانے جارہے ہیں ۔

مزید : قومی