برطانیہ کی طرز پر فلیٹ ریٹ سکیم لانے کی ضرورت ہے: پروفیشنل ریسرچ فورم

  برطانیہ کی طرز پر فلیٹ ریٹ سکیم لانے کی ضرورت ہے: پروفیشنل ریسرچ فورم

  

لاہور(این این آئی)پروفیشنل ریسرچ فورم نے تجویز دیتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت ملکی معیشت کو سہارا دینے اور ان ڈائریکٹ ٹیکسیشن نظام کو بہتر بنانے کے لیے سنگل ڈیجٹ ٹیکس ریٹس نافذ کرے،برطانیہ کی طرز پر فلیٹ ریٹ سکیم کا نفاذ ناگزیر ہے،ود ہولڈنگ اور سیلز ٹیکسز عوام کے ساتھ نا انصافی اور ان پر بوجھ ہیں۔ان خیالات کا اظہار فورم کے چیئرمین سید حسن علی قادری نے موجودہ معاشی حالات کے حوالے سے ویڈیو لنک جائزہ اجلاس میں کیا جس میں شرکاء کی جانب سے تجاویز بھی دی گئیں۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں انکم ٹیکس وصولی کو یقینی بنانے کی بجائے سیلز ٹیکس پر زیادہ انحصار کیا جا رہا ہے،ودہولڈنگ ٹیکسز کے ذریعے 85 فیصد ٹیکس وصولی کی جا رہی ہے جوکہ عوام کے ساتھ نا انصافی اور بوجھ ہے۔ سیلز ٹیکس پر آڈٹ اور ان پٹ ایڈجسٹمنٹ ایشوز کو ختم کرنے کے لیے ٹیکس مشینری ناکافی ہے، ان مسائل سے چھٹکارا پانے کے لیے برطانیہ کے طرزپر فلیٹ ریٹ سکیم کے ذریعے معاشی استحکام کوممکن بنا یا جا سکتا ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان میں 16/17 فیصد سیلز ٹیکس وصول کرنا بھی عوام کے ساتھ نا انصافی ہے اوریہی وجہ ہے کہ لوگ ٹیکس نظام میں آنے سے گھبراتے ہیں۔ حکومت ان ڈائریکٹ ٹیکسیشن نظام کو بہتر بنانے کے لیے سنگل ڈیجٹ ٹیکس ریٹس نافذ کرے۔

 کورونا کے بعدصورتحال کو کنٹرول کرنے اور معاشی استحکام کے لیے حکومت کو جنگی بنیادوں پر کام کرنے کی ضرورت ہے۔

مزید :

کامرس -