جتوئی: دریائے سندھ کا کٹاؤ جاری‘ ہزاروں ایکڑاراضی پانی کی نذر

  جتوئی: دریائے سندھ کا کٹاؤ جاری‘ ہزاروں ایکڑاراضی پانی کی نذر

  

جتوئی (نمائندہ پاکستان) دریا سندھ کا کٹاو جاری ہزاروں ایکڑ رقبہ دریا برد ھو ہوگیا ہزاروں لوگ کھلے آسمان تلے زندگی گزارنے پر مجبور متاثرین کا وزیراعلی پنجاب سے امداد کی اپیل تفصیلات کے مطابق تحصیل جتوئی کا نواحی علاقہ موضع لنڈی پتافی موضع بیٹ دریائی موضع بھنڈہ مہربان کے ہزاروں متاثرین لوگوں خدابخش حضوربخش وسیم علی عبیداللہ محمد بلال محمد(بقیہ نمبر38صفحہ6پر)

قاسم محمد اصغر محمد فیصل محمد عمران ودیگر نے احتجاج کرتے ہوئے صحافیوں کو بتایا کہ20سے 25 سال سے دریا سندھ کا کٹاو ہزاروں ایکڑ رقبہ دریا اپنی لپیٹ میں لے چکا ہے اور انہوں نے کہا کہ ہمارے مقامی ایم این اے ایم پی اے الیکشن کے وقت ووٹ مانگنے ہیں آجاتے ہیں الیکشن کے بعد غائب ہو جاتے ہیں انہوں نے یہ بھی کہا کہ ہمارے علاقے میں نہ کوئی پکی سڑکیں نہ سکول اور نہ ہی بچوں کا مستقبل انہوں نے یہ بھی کہا کہ ہمارے مقامی ایم پی اے سردار خرم سہیل خان لغاری نے بھی دریا سندھ کے کٹاو کا وزٹ کیا تھا مگر آج تک کوئی کام شروع نہ ہوسکا اب بھی ہزاروں لوگوں اپنے بچوں کے سمیت کھلے آسمان تلے زندگی گزارنے پر مجبور ہیں انہوں نے وزیر اعلی پنجاب سردار عثمان کا بزدار سے اپیل کی ہے کہ ہماری مدد کی جائے اور زمینوں کو دریا برد ہونے سے بچایا جائے انہوں نے یہ بھی کہا کہ سابق حکومت میں کرن جا کروڑ کی لاگت سے تیار ہونے والا سپر بند آج بھی نامکمل ہے اور ٹھیکیدار کام چھوڑ کر فرار ہو چکا ہے اور کئی بار اعلی حکام کو درخواست دی مگر آج تک کوئی سنوائی عمل میں نہ ہوسکی اس کرپشن کی تحقیقات کرنے کا مطالبہ کیا ہے

دریائی کٹاؤ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -