وہ ریاست جہاں کورونا وائرس منتقل کرنے پر عمر قید کی سزا کا قانون منظور کرلیا گیا

وہ ریاست جہاں کورونا وائرس منتقل کرنے پر عمر قید کی سزا کا قانون منظور کرلیا ...
وہ ریاست جہاں کورونا وائرس منتقل کرنے پر عمر قید کی سزا کا قانون منظور کرلیا گیا

  

لکھنو(ڈیلی پاکستان آن لائن) بھارت کی آبادی کے لحاظ سے سب سے بڑی ریاست اتر پردیش میں ریاستی اسمبلی نے ایک بل منظور کیا ہے جس کے تحت جان بوجھ کر کسی دوسرے شخص کو کورونا وائرس منتقل کرنے پر سات سال سے عمر قید کی سزا سنائی جاسکتی ہے۔

بی بی سی کے مطابق  اس جز وقتی قانون کے مطابق   اگر ایک شخص جان بوجھ کر کسی دوسرے شحض کو کوووڈ 19 سے متاثر کرے گا اور اس سے متاثرہونے والے شخص کا انتقال ہوجاتا ہے تووائرس منتقل کرنے والے شخص کو سات سال سے عمر قید تک کی سزا ہو سکتی ہے۔

بدھ کو منظور کیے جانے والے اس قانون کے تحت جان بوجھ کر وائرس منتقل کرنے کی سزا دو سے پانچ سال کی قید ہے۔

تاہم اس جان بوجھ کر پھیلائے گئے انفیکشن کی وجہ سے اگر کسی کی جان چلی جاتی ہے تو اس کی سزا سخت ہوگی جو سات سال قید کے ساتھ ساتھ 3970 سے 6610 ڈالر جرمانے تک ہوگی۔

کچھ ماہرین صحت نے اس اقدام پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس کی وجہ سے ریاست کی جانب سے سخت کارروائیاں کیے جانے کا امکان بڑھ جائے گا۔تاہم حکام نے ٹائمز آف انڈیا کو بتایا کہ اس اقدام کا مقصد لوگوں کی حوصلہ افزائی کرنا ہے کہ اگر ان میں سے کسی کو انفیکشن ہوتا ہے تو وہ متعلقہ اداروں کو بتائیں۔

خیال رہے بھارت میں اس وقت رجسٹرڈ کیسز کی تعداد اڑتیس ہزار ہے جبکہ 1886افراد لقمہ اجل بن چکے ہیں۔

مزید :

بین الاقوامی -کورونا وائرس -