سردی بڑھتے ہی لنڈا بازار میں گرم کپڑوں کی قیمتوں میں 40فیصد اضافہ

سردی بڑھتے ہی لنڈا بازار میں گرم کپڑوں کی قیمتوں میں 40فیصد اضافہ

 لاہور( اسد اقبال ) سردی کی شدت میں قدرے اضافہ کے ساتھ ہی صو بائی دارالحکو مت میں دکانداروں نے سیکنڈ ہینڈ گرم ملبوسات کے سٹالز سجا لیے ہیں جہاں پر سفید پو ش طبقے سمیت غریب شہر یو ں نے خریداری کا سلسلہ بھی شروع کر دیا ہے گزشتہ سال کی نسبت سیکنڈ ہینڈ کپڑوں کی قیمتو ں میں 30سے 40فیصد اضافہ دیکھنے میں آ یا ہے لاہور میں پر چو ن کی سطح پر لنڈے کا سب سے بڑا کاروبارنو لکھا بازار و بوہڑ والا چوک ایمپرس روڈ میں ہو رہا ہے جبکہ میو ہسپتا ل روڈ ، اچھرہ ، یتیم خانہ ، باغبانپو رہ، ملتان روڈ ،غازی آباد ، اور گرین ٹاؤ ن سمیت شہر بھر میں لنڈ ے کے پرانے گر م کپڑو ں کے ٹھیلے سج گئے ہیں پا کستان رپورٹ کے مطا بق سیکنڈ ہینڈ کپڑو ں کی خر یداری کے لیے شہریو ں کی بڑی تعداد نے لنڈا بازاروں کا رخ کر لیا ہے ایمپر س روڈ پر لنڈا فروش ریڑھی بانو ں اور صارفین کا رش اس قدر بڑھ چکا ہے کہ ٹر یفک کا جا م رہنا معمو ل بن چکا ہے شہریو ں کا کہنا ہے کہ مو سم میں تبد یلی کے ساتھ ہی عام شہریو ں کو اپنا تن ڈھا نپنے کے لیے لنڈے بازاروں کا رخ کر نا پڑ تا ہے جہا ں پر بھی ہر سال قیمتو ں میں اضافہ ہو تا ہے جو غریب شہریو ں کے لیے ظلم سے کم نہیں انھو ں نے کہا کہ حکو مت لنڈے کے پرانے کپڑے کی قیمتو ں میں کمی کے لیے ٹھوس اقدامات کرے پاکستان سے گفتگو کرتے ہو ئے لنڈا بازارنولکھا کے جنرل سیکر ٹر ی نعیم بادشاہ کا کہنا تھا کہ رواں سیزن میں مو سم سر ما کے آغاز سے لنڈے کے کاروبار میں تیزی نہیں آ رہی ان کا کہنا تھا کہ رواں سال لنڈے کے گرم کپڑوں کی قیمتو ں میں قدرے اضافہ ممکن ہے جس کی وجہ درآمدی ٹیکسز سمیت پٹرولیم مصنو عات کی قیمتو ں میں اضا فہ اورپاکستانی کر نسی کی ڈی ویلیو ایشن ہے نعیم باد شاہ کا کہنا تھا کہ اگر حکو مت سیکنڈ ہینڈ کپڑوں پر عائد جنرل سیلز ٹیکس ختم کر دے تو لنڈے کے کپڑو ں کی قیمتو ں میں 50فیصد تک کمی واقع ہو جائے گی ۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...