اردن کے سکول پر جنات کے حملے میں 4 طالبات زخمی

اردن کے سکول پر جنات کے حملے میں 4 طالبات زخمی
اردن کے سکول پر جنات کے حملے میں 4 طالبات زخمی

  

عمان(مانیٹرنگ ڈیسک) آپ نے جن بھوتوں اور  چڑیلوں کے انسانوں پر  حملوں کے قصے کہانیاں اور افسانے تو بہت پڑھ اور سن رکھے ہوں گے مگر اس کی حقیقت اردن کے ان طالب علموں سے پوچھی جائے جنہوں نے عملی طور پر نہ صرف جنوں کو دیکھا بلکہ ان کے حملے کا شکار ہو کر زخمی بھی ہوئے۔

اردن کے واقع لڑکیوں کے ایک اسکول میں اس وقت کہرام مچ گیا جب جنوں  کے ایک شیطانی گروہ نے اچانک حملہ کر دیا جس کے نتیجے میں 4 طالبات زخمی ہو گئیں۔ اس حملے کے بعد بعض مقامی افراد کا کہنا ہے کہ اسکول پر شیطان جنوں کا قبضہ ہے کیونکہ  اسکول کے ارد گرد  آسیب زدہ درخت موجود ہیں اور عموماً ایسی عمارتیں بھی جنات اور شیاطین سے محفوظ نہیں رہ سکتیں۔

واضح رہے کہ اس سے قبل بھی ایک دفعہ اردن ہی  کے ایک اسکول میں جنوں نے حملہ کر دیاتھا جس میں ایک خاتون ٹیچر اور 17 طالبات نے بمشکل اپنی جان بچانے میں کامیاب ہوئیں تھیں۔

مزید : ڈیلی بائیٹس