سموگ کی وجہ سے شہریوں کی صحت پر برے اثرات مرتب ہونے لگے

سموگ کی وجہ سے شہریوں کی صحت پر برے اثرات مرتب ہونے لگے

  



لاہور(فلم رپورٹر) شوبز شخصیات کا کہنا ہے کہلاہور میں سموگ کی وجہ سے لوگوں کی صحت پربرے اثرات مرتب ہورہے ہیں۔ہماری حکومت کو چاہیے کہ سموگ کا سبب ننے والی گاڑیوں اور فیکٹریوں پر بھاری جرمانہ عائد کریں۔شوبز شخصیات کا کہنا ہے کہ سموگ کے حوالے سے حکومت کی آگاہی مہم اچھی ہے موجودہ صورتحال میں ہر شخص کو ماسک پہن کر گھر سے باہر نکلنا چاہیے۔لاہور میں آلودگی اس حد تک بڑھ گئی ہے کہ اس مثال نہیں ملتی۔اس کے ساتھ ساتھ عدالت نے برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اب ایسا ہرسال ہوگا حکومت پہلے اقدامات کیوں نہیں کرتی، عدالت نے استفسار کیا کہ کیا آپ صرف لاہور کی بات کر رہے ہیں دیگر اضلاع کے لئے کیا اقدامات ہوں گے۔ سرکاری وکیل کے مطابق حکومت مجموعی طور پر تمام جگہوں کے لئے اقدامات کررہی ہے۔ شوبز شخصیات کا کہنا ہے کہ ہر بارسردیوں کے موسم میں سموگ میں اضافہ ہو جاتا ہے،سموگ سے کئی بیماریاں جنم لیتی ہیں مگر اس پر قابو پانے کیلئے اقدامات نہیں کئے جا رہے،گزشتہ سال بھٹے بند کئے گئے مگر رواں سال ابھی تک اینٹوں کے بھٹے بند نہیں کئے گئے، لہذا استدعا ہے کہ اینٹوں کے بھٹے سردیوں میں بند کرنے اور فصلیں جلانے سے روکا جائے۔شاہد حمید،شان،معمر رانا،مسعود بٹ،پرویز کلیم،میگھا،ماہ نور،شاہدہ منی،لائبہ علی،سہراب افگن،سٹار میکر جرار رضوی،یار محمد شمسی صابری،گلفام،ہانی بلوچ،اچھی خان،ذویا قاضی،مایا سونو خان،ڈیشی راج،آغا قیصر عباس،سدرہ نور،ندا چوہدری،آفرین خان،آفرین پری، اور دیگر کا کہنا ہے کہ بچوں پرسموگ کے انتہائی مضر اثرات مرتب ہو رہے ہیں۔یاد رہے کہ گزشتہ روز سموگ کی وجہ سیمحکمہ تعلیم کے نوٹیفیکیشن کے بعد لاہور کے تمام تعلیمی ادارے بند رہے۔

آشا چوہدری،عامر راجہ،بی جی،سفیان احمد،انوسنٹ اشفاق،محرمہ علی،عباس باجوہ،آغا حیدر،شین فریال،نادیہ علی،سوھنی بلوچ،اشرف خان،عذرا آفتاب،حیدر سلطان،بابرہ علی،تابندہ علی،ڈاکٹر اجمل ملک،مختار احمد چوہان،فیصل بخاری،چوہدری اعجاز کامران،قیصر ثناء اللہ خان،حاجی عبد الرزاق،پریسہ،حنا ملک،شہزاد چندا،ہنی البیلا،حسن مراد،امان اللہ،نجم زیدی،ثمینہ بٹ،سرفراز وکی،بینا سحر،عائشہ جاوید،ابرار ہاشمی،وقاص کیدو،زری لعل،شہہ پارہ،ستارہ بیگ،لکی ڈیئر،طاہر نوشاد،مختار چن،اسد مکھڑا،شجر عباس،نواز انجم،احمد نواز،محسن گیلانی،دلاور ملک،عباس اشرف،افشین اشرف،بینا چوہدری

مزید : کلچر


loading...