سرکاری نرخ پر گنے کی خریداری کو یقینی بنانا وقت کی ضرورت ہے : گورنر سندھ 

سرکاری نرخ پر گنے کی خریداری کو یقینی بنانا وقت کی ضرورت ہے : گورنر سندھ 

  



کراچی(اسٹاف رپورٹر)گورنر سندھ عمران اسماعیل سے سندھ کے چھوٹے آبادگاروں کے وفد کی گورنر ہاﺅس میں ملاقات کی ۔ اس موقع پر محمود مولوی، رکن سندھ اسمبلی سدرہ عمران بھی موجود تھیں۔ ملاقات میں وفد نے گورنر سندھ کو آبادگاروں کے مسائل کے بارے میں تفصیل سے آگاہ کیا۔ آبادکاروں کا کہنا تھا کہ گنے کی مقررہ نرخ سے کم قیمت پر فروخت سے آبادگاروں کا معاشی قتل کیا جا رہا ہے۔ وفد نے گورنر سندھ کو مقررہ وقت پر کرشنگ نہ ہونے، باردانہ کی عدم دستیابی اور دیگر مسائل سے بھی آگاہ کیا۔ سپریم کوٹ کے فیصلے پر عمل درآمد وفاقی حکومت کو کرانا چاہیے۔ بجلی کے نرخ بڑھنے کی وجہ سے آبادگاروں کو سبسڈی دی جائے۔ آبادگاروں کا مزید کہنا تھا کہ شوگر ملز مالکان چھوٹے ذمینداروں کے ساتھ زیادتی کر رہے ہیں اس کا ازالہ کیا جائے۔ آبادگاروں کا مزید کہنا تھا کہ پہلی بار کسی گورنر نے چھوٹے آبادگاروں کو بلا کر مسائل سنے اس پر ہم آپ کے شکر گزار ہیں۔ شوگر انڈسٹری کو آئین اور قانون کا تحفظ ہے۔ 15 اکتوبر تک ملز کو چلانا صوبائی حکومت کی ذمہ داری ہے۔ وفاقی حکومت کین کمشنر کو پابند کرے کہ وہ ملز کو مقررہ وقت پر چلائے جانے کے اقدام اور مقرہ نرخ پر فروخت یقینی بنائے۔ ایری گیشن پانی موجود ہے ضرورت اس امر کی ہے کہ کرپشن کو ختم کیا جائے اور پانی کو منصفانہ طریقے سے تقسیم کی جائے۔ گورنر سندھ نے وفد کو یقین دہانی کراتے ہوئے کہا کہ وہ وزیراعظم سے ملاقات میں آبادگاروں کے مسائل اور ان کی فلاح و بہبود پر بات کرینگے۔ وفاقی حکومت کپاس، گنے، چاول اور گندم کی فصل پر خاص توجہ دے رہی ہے۔ سرکاری نرخ پر گنے کی خریداری اور مقررہ وقت پر کرشنگ کو یقینی بنانا وقت کی اہم ضرورت ہے۔

مزید : صفحہ اول


loading...