ایران میں اعلیٰ عہدے انقلاب کے حامیوں کے لیے مختص ہیں: آیت اللہ جنتی

ایران میں اعلیٰ عہدے انقلاب کے حامیوں کے لیے مختص ہیں: آیت اللہ جنتی

  

تہران ( آن لائن )ایران کی گارڈین کونسل کے چیئرمین آیت اللہ احمد جنتی نے کہا ہے کہ ملک کے تمام اعلیٰ عہدے ایرانی رجیم، انقلاب کے حامیوں اور معاونین اور پاسداران انقلاب کے قیادت کے فرنزدوں کے لیے مختص ہیں۔ ان کا کہنا ہے کہ جو شخص ولایت فقیہ، انقلاب ایران اور دستور پر یقین نہیں رکھتا وہ پارلیمانی انتخابات کا امیدوار بھی نہیں بن سکتا۔ غیرملکی میڈیا سکے مطابق اپنے ایک بیان میں گارڈین کونسل کے چیئرمین نے خدشہ ظاہر کیا کہ ایران کے متنازع جوہری_پروگرام پر معاہدے کے نتیجے میں مغرب تہران کے اندرونی معاملات میں مداخلت کی سازش کرسکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ غیرملکی ہمارے ثقافتی مراکز تک رسائی کی کوشش کررہے ہیں۔ ان کا مقصد ایران کی اسلامی تہذیب وثقافت کو مغربی رنگ میں تبدیل کرنا اور ایران کی سیاست، معیشت اور امن کو تباہ وبرباد کرنا ہے۔آیت اللہ جنتی نے امریکا سے قربت پیدا کرنے کی کوشش کرنے والے رہ نماؤں اور مبلغین کو کڑی تنقید کا نشانہ بناتیہوئے کہا کہ بعض عناصر امن وامان اور امریکا میں اپنا اعتبار پیدا کرنے کے لیے امریکیوں سے راہ و رسم بڑھانے کی کوشش کررہے ہیں۔ ان کا خیال ہے کہ ایران میں امام انقلاب آیت اللہ العظمیٰ خمینی کا برپا کردہ انقلاب ختم ہوچکا ہے۔خیال رہے کہ ایران میں مغرب مخالف شدت پسند حلقوں اور اعتدال پسندوں کے درمیان مسلسل رسا کشی جاری رہتی ہے۔

آئندہ سال ایران میں ہونے والے پارلیمانی انتخابات سے قبل آیت اللہ علی جنتی جیسے بنیاد پرست ریاستی عناصر اور روشن خیال طبقات کے درمیان کشمکش زور پکڑ گئی ہے۔ایران کے قدامت پسند حلقوں کی جانب سے بائیں بازو کے مخالفین کو اعلیٰ عہدوں تک پہنچنے سے روکنے کے لیے بھی ایڑی چوٹی کا زور لگایا جا تا ہے۔ بنیاد پرست حلقے پارلیمانی انتخابات میں اصلاح پسندوں کو محدود کرنے کے لیے بھی پوری کوشش کررہے ہیں۔

مزید :

عالمی منظر -