پنجاب بنک سے قرضہ لینے والوں کیخلاف مقدمات درج کرنے کیخلاف درخواست پر وکلاء حتمی بحث کیلئے طلب

پنجاب بنک سے قرضہ لینے والوں کیخلاف مقدمات درج کرنے کیخلاف درخواست پر وکلاء ...

  

لاہور(نامہ نگار خصوصی )لاہورہائیکورٹ کے مسٹر جسٹس مظہر اقبال سدھو کی سربراہی میں قائم ڈویژن بینچ نے مبینہ سیاسی دباؤ پربینک آف پنجاب انتظامیہ کی جانب سے قرضہ لینے والے افراد کے خلاف مقدمات درج کرنے کے خلاف دائر درخواست پر فریقین کے وکلاء کو حتمی بحث کیلئے طلب کرتے ہوئے مزید سماعت 19 اکتوبر تک ملتوی کر دی ۔پنجاب بینک کی جانب سے عدالت کو بتایا گیا کہ ملزم احمد فاروق وغیرہ نے بینک آف پنجاب سے دودھ کی فیکٹری کے لئے قرضہ لیا اور طے شدہ جگہ پر مشینری نصب کرنے کی بجائے دوسری جگہ نصب کر دی.ملزمان کے وکیل پیر مسعود چشتی نے عدالت کو بتایا کہ ملزمان اپنے ذمہ واجب الادا اقساط بینک میں جمع کروا چکے ہیں.بینک انتظامیہ نے سیاسی مخالفین کے ایما پر ان کی مشینری اور رہن رکھی گئی زمین بھی اپنے قبضے میں لے لی ہے جبکہ ایک مقدمہ تھانہ چوہنگ اور دوسرا مقدمہ ایف آئی اے کے پاس درج کرا دیاہے جو کہ قوانین کی واضح خلاف ورزی ہے.انہوں نے کہا کہ قوانین کے تحت ایک ہی جرم میں دو مقدمے درج نہیں کئے جا سکتے.جس پر عدالت نے فریقین کے وکلاء کو حتمی بحث کے لئے طلب کرتے ہوئے مزید سماعت 19 اکتوبر تک ملتوی کر دی۔

مزید :

صفحہ آخر -