موجودہ بوسیدہ نظام کا باغی ہوں جس میں انصاف اور یکساں نظام تعلیم نہیں: سراج الحق

موجودہ بوسیدہ نظام کا باغی ہوں جس میں انصاف اور یکساں نظام تعلیم نہیں: سراج ...

  

جہانیاں (آئی این پی ) جماعت اسلامی کے امیر سینٹر سراج الحق نے کہا ہے کہ موجودہ بوسیدہ نظام کا باغی ہوں جس میں انصاف نہیں ،یکساں نظام تعلیم نہیں ،سود نس نس میں سمایا ہو،امیر امیر تر ہو اور غریب کو ایک وقت کا کھانا بھی میسر نہ ہو،یکساں نظام تعلیم۔سود سے پاک معیشت ،جما عت اسلامی کے سلو گن اسلامی پا کستان خو شحا ل پا کستان میں شہر یو ں کو تعلیم صحت کسان کو اس کی فصل کی مکمل قیمت دینا ہے تاکہ برابری کی سطح پران کا حق مل سکے۔صحافیوں سے گفتگو میں سراج الحق نے کہا کہ کسا ن راج ریلی کا مقصد کسانو ں کو خو شحال کر نا ہے کسانو ں کو ان کی محنت کا صلہ بہتربر وقت اور مل سکے ان کی فصلوں کے لئے سپورٹ پرائس کا اعلان حکو مت فوری طور پر کر ئے کپا س کی قیمت4000چاول با سپتی2800مکی1800گنا کے نرخ250روپے فی من مقر ر کئے جا ئیں انہو ں نے کہا کہ کسا نو ں کی ضرویا ت کی تما م اشیا ء پر جنرل سیلز ٹیکس ختم کیا جا ئے ملک سے جب تک سودی نظا مختم نہیں کیا جا تا جب تک ملک تر قی کی راہ پر گا مز ن نہیں ہو سکتا اسلامی نظا م سے معاشر ے کے ہر طبقے کو اس کا مکمل حق دیا جا ئے گا جس سے ملک خو شحا ل ہو سکتا ہے امیر جما عت اسلا می سراج الحق نے جہا نیا ں میں صحا فیو ں سے با ت چیت کر تے ہو ئے کہا کہ 2018 کے الیکشن سے قبل الیکشن ریفارمز نہا یت ضروری ہے میاں برادران کی سوچ بھی اپنی ذات کی حد تک ہی محدود ہیں وہ بھی اسلامی پاکستان اور خوشحال پاکستان کی ضمانت نہیں ان کے دور حکومت میں کسانوں کے ساتھ ہونے والی ناانصافیوں کو نظر انداز نہیں کیا جا سکتا کیوں کہ زراعت ہماری ملکی معیشت میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتی ہے اس لئے کسانوں سے اظہار یکجہتی کے لئے ملک گیر تحریک ،کسان راج،تحریک کا اغاز کر دیا ہے انہو ں نے کہا کہ اسلا م آبا د کے حکمران کالا با غ ڈیم پر صرف سیا ت کر تے ہیں کا لا باغ ڈیم وقت کی اہم ضروت ہے۔

مزید :

صفحہ آخر -