بریسٹ کینسر اویئرنس کیلئے سوفلین اور پنک ربن ایک ساتھ

بریسٹ کینسر اویئرنس کیلئے سوفلین اور پنک ربن ایک ساتھ

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر) سوفلین اور پنک ربن پاکستان نے متحدہو کر پورے پاکستان میں بریسٹ کینسر کی آگاہی کیلئے کام کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ پورے ایشیاء میں پاکستان میں سب سے زیادہ کینسر کیسز تشخیص کیے جاتے ہیں۔ ہر 9 میں سے 1 پاکستانی عورت کو اس جان لیوا مرض میں مبتلا ہونے کا خدشہ ہے۔ ورلڈ بریسٹ کینسر اویئرنس منتھ کے اعزاز میں سوفلین نے اپنی سالانہ مہم کی افتتاحی تقریب کولگیٹ پامولو پاسکتان کے ہیڈآفس میں منعقد کی۔ سوفلین نے بریسٹ کینسر کی آگاہی کیلئے پنک ربن پاکستان کے ساتھ ایک مفاہمتی (MoU) پر دستخط کیے اس معاہدہ پرکولگیٹ پامولو کے ایسوسی ایٹ ڈائریکٹر مارکیٹنگ عمر قادری اور پنک ربن پاکستان کے سی ای او عمر آفتاب نے دستخط کیے۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے سوفلین کی برانڈ منیجر سدرہ اکرام شیخ نے کہا کہ عورت اپنے گھر کا ایک اہم رکن ہے اور ہمارا مرکزی صارف، اسی لیے ہم ان کی صحت اور تندرستی کا خاص خیال کرتے ہیں۔ سوفلین بریسٹ کینسر اویئرنس مہم کا خاص مقصد یہ ہے کہ عورتوں کو زیادہ سے زیادہ معلومات دیں اور قبل از وقت احتیاطی تدابیر کے بارے میں بتائیں۔ اس مہینے سوفلین کی سیل کا کچھ حصہ پنک ربن برسیٹ کینسر ہسپتال کو عطیات کے طور پر بھی دیا جائے گا۔ اس موقع پر ماریا مزاری (بریسٹ کینسر سروائیور) بھی اس تقریب کا حصہ بنیں اور اپنا بریسٹ کینسر سے بچنے کا سفر بیان کیا۔ تقریب میں شامل ہونے والوں کو ’’ارلی ڈیٹیکشن‘‘ کو احتیاطی تدابیر کے طور پر استعمال کرنے کی اہمیت بھی بتائی گی۔ اس احتیاطی تدابیر کے ذریعے سے بریسٹ کینسر کے امکانات کو کم کیا جاسکتا ہے۔ پنک ربن پاکستان کے سی ای او عمر آفتاب نے کہا کہ پنک ربن پاکستان اس سال پہلے سے بھی زیادہ بریسٹ کینسر اویئرنس بڑھانے کے لئے جدوجہد کرے گا۔ سوفلین کے تعاون کے ساتھ ہم اس سال پنک ربن بریسٹ کینسر ہسپتال کی تعمیر کیلئے کام کریں گے۔ تقریب کے شرکاء نے اس مہم سے عہد کا اظہار، سوفلین، پنک ربن پلج وال پر ہینڈ پرنٹ لگا کر کیا اور ساتھ جڑHuman پنک بنائی

مزید :

کراچی صفحہ آخر -